• Tuesday, 29 November 2022
امریکی خلائی ادارے ناسا کے سپیس کرافٹ کی سیارچے سے ٹکرا نےکی ویڈیو

امریکی خلائی ادارے ناسا کے سپیس کرافٹ کی سیارچے سے ٹکرا نےکی ویڈیو

امریکا(نیاٹائم ویب ڈیسک)امریکی خلائی ادارے ناسا کا زمین کو سیارچوں کی ٹکر سے محفوظ رکھنے کا مشن جاری ہے جس  کیلئے زمین سے بھیجا گیا تجرباتی ڈارٹ سپیس کرافٹ سیارچے ڈیمورفس سے ٹکرا گیا ہے ۔ناسا کے مطابق ڈارٹ سپیس کرافٹ 23 ہزار 500 کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے سیارچے سے ٹکرایا،اس کامیابی پر نا سا کے انجئینرز اور ماہرین خوشی سے جھوم اٹھےاورایک دوسرے کوگلےلگایا۔

                                    

رپورٹس کے مطابق اس مشن کا مقصد زمین کو کسی خطرناک خلائی چٹان کے ٹکراؤ سے محفوظ رکھنے کی جانچ پڑتال بھی  کرنا ہے۔تجربے کے رزلٹ  کچھ  دن یا ہفتوں میں سامنے آنے کا بھی  امکان  ہے ۔ اگر مشن کامیاب ہوا یعنی سیارچے کے مدار کا راستہ تبدیل ہو گیا تو یہ طریقہ زمین کی طرف بڑھنے والے سیارچوں کی روک تھام کیلئے اہم دفاعی ہتھیار ثابت ہوسکے گا۔سائنسدان پہلے ہی ایسے کئی سیارچوں کو شناخت کرچکے ہیں جو زمین کو تباہ کرسکتے ہیں، مگر فی الحال ان میں سے کوئی بھی ہمارے سیارے کیلئےزیادہ  خطرہ نہیں۔مگر سائنسدانوں کو ڈر ہے کہ ہزاروں چھوٹے سیارچوں میں کوئی ایک کسی دن زمین کی طرف بڑھ سکتا ہے اور اس کا ٹکراؤ تباہ کن  بھی ثابت ہوسکتا ہے۔ڈارٹ سپیس کرافٹ کو امریکا کی جونز ہوپکنز یونیورسٹی نے تیار کیا اور اسے ڈیمورفس کی طرف سے نومبر 2021 میں روانہ کیا گیاتھا۔