مسلح ڈاکوؤں  نے مسجد پر حملہ کرکے 15 افراد کو قتل کردیا

مسلح ڈاکوؤں نے مسجد پر حملہ کرکے 15 افراد کو قتل کردیا

جیما ٹاؤن(نیاٹائم)نائیجیریا کے شمال مغربی اسٹیٹ زمفرا کے علاقے رووان جیما ٹاؤن کی ایک لوکل جامع مسجد پرمسلح ڈاکوؤں نے حملہ کرکے پندرہ افراد کی زندگیاں چھین لی۔

 

برطانوی خبر رساں ادارے کی ایک خبر کے مطابق موٹر سائیکلوں پر سوار مسلح ڈاکو مسجد میں داخل ہوئے اور اندھادھند فائرنگ شروع کردی جس کے نتیجے میں مسجد میں موجود پندرہ نمازی جاں بحق ہو گئے اور کئی فائرنگ سے زخمی ہوئے۔ رپورٹ کے مطابق شہریوں کا کہنا تھا کہ واقعے کے وقت پولیس کو فوری خبر دی گئی تھی تاہم پولیس کی طرف سے بروقت کوئی ایکشن عمل میں نہیں لایا گیا۔ شہریوں کا کہنا ہے کہ ان کی طرف سے ڈاکوؤں کو اکیس ہزار ڈالر، پیٹرول اور سگریٹ دیے گئے تھے تاکہ وہ اس شہر کا امن خراب نہ کریں لیکن ڈاکوؤں نے شہر کی مسجد پر اٹیک کرکے بے گناہ افراد کو ماردیا اور پولیس نے کوئی کارروائی عمل میں نہیں لائی۔

 

 یاد رہے کہ پچھلے دو سال کے دوران شمال مغربی نائیجیریا کے مختلف شہروں میں ڈاکو راج نے دہشت کی دھاک بٹھائی ہوئی ہے اور اس دوران ہزاروں شہریوں کے اغوا برائے تاوان سمیت سیکڑوں لوگوں کو موت کے گھات اتارا گیا۔ واضح رہے کہ نائیجیرین عسکری حکام کی طرف سے کچھ دن پہلے ڈاکوؤں کے خلاف فوجی آپریشن اور بمباری کے پیش نظر شمال مغربی ریاست زمفرا سمیت دیگر دو ریاستوں میں عوام کو جنگل سے جڑے علاقے خالی کرنے کی ہدایت کی گئی تھی۔

 

لودھراں میں مسلح ڈکیتیوں کے سلسلے رک نہ سکے