• Friday, 30 September 2022
اقوا م متحدہ کے سیکرٹری جنرل کے دورہ پر پروٹوکول کی خلاف ورزی

اقوا م متحدہ کے سیکرٹری جنرل کے دورہ پر پروٹوکول کی خلاف ورزی

اسلام آباد (نیا ٹائم) اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوتریس کے دورہ پاکستان کے دوران پروٹوکول کی خلاف ورزیوں پر وزارت خاجہ کا سندھ پولیس کے سپیشل یونٹ پر شدید برہمی کا اظہار ، خط لکھ دیا ۔

وزارت خارجہ کی طرف سے چیف سیکرٹری سندھ کے نام لکھے گئے مراسلے میں کہا گیا ہے کہ سپیشل سکیورٹی یونٹ  (ایس ایس یو )کے افسر نے زبردستی سیکرٹری جنرل کے کمرے میں  داخل ہو کر انہیں تحائف پیش کئے اور ان کے ساتھ تصاویر بھی بنوائیں ۔

وزارت خارجہ کی جانب سے لکھے گئے خط میں کہا گیا ہے کہ سپیشل برانچ کے اہلکاروں نے مہمانوں کے کمروں کے قریب ڈیوٹی تک ادا نہیں کی ۔

وزارت خارجہ کی طرف سے لکھے گئے خط کے موصول ہونے پر چیف سیکرٹری سندھ نے آئی جی سندھ اور سیکرٹری داخلہ کو بھی خط لکھ دیا ہے ۔

ذرائع کے مطابق چیف سیکرٹری نے اپنے خط میں کہا ہے کہ ایس ایس یو اور سپیشل برانچ سے متعلق وزارت خارجہ کے تحفظات پر رپورٹ تیار کی جائے ۔ صورتحال کے حوالے سے ابتدائی تحقیقات کر کے معلومات بھی فراہم کی جائیں ۔

واضح رہے گزشتہ دنوں اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوتریس پاکستان کے سیلاب سے متاثرہ علاقوں کے دورے پر پاکستان آئے تھے ۔ وزیر اعظم شہباز شریف اور وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری بھی اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کے ساتھ موجود تھے ۔

ایس ایس یو اہلکاروں کے اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کے کمرے میں بغیر اجازت داخلے پر آئی جی سندھ نے کراچی پولیس چیف کو معاملے کی انکوائری کا حکم دے دیا ہے ۔

آئی جی سندھ غلام نبی میمن نے کہا ہے کہ ایس ایس یو اہلکاروں کو ایسا بالکل نہیں کرنا چاہئے تھا ۔ پروٹوکولز میں مداخلت بالکل بھی درست عمل نہیں ۔ اب تک کی تحقیقات کے مطابق کوئی بھی سینئر افسر اس واقعہ میں ملوث نہیں ۔ تاہم انہوں نے کہا ہے کراچی پولیس چیف انکوائری کر کے مجھے رپورٹ پیش کریں گے ۔

 

فواد چوہدری نے چیف جسٹس پاکستان کی رائے کو آئین کے منافی قرار دیدیا