• Friday, 30 September 2022
ایلون مسک کا روبوٹک فوج متعارف کروانے کا اعلان

ایلون مسک کا روبوٹک فوج متعارف کروانے کا اعلان

لاہور (نیا ٹائم ویب ڈیسک)دنیا کے امیر ترین شخص ایلون  مسک کی مشہور ٹیسلا کمپنی نے الیکٹرک گاڑیوں کی کامیابی کے بعد نے انسان نما روبوٹک فوج متعارف کروانے کا اعلان کر دیا ۔

امریکی کمپنی انسانی لیبر کے بجائے ہزاروں ٹیسلا بوٹس یا آپٹیمس نامی روبوٹس اپنی فیکٹریون اور دیگر جگہوں پر تعینات کرنے کی خواہش مند ہے ۔ ٹیسلا کی ویب سائٹس پر ملازمتوں کے سیکشن سے عندیہ ملتا ہے کہ کمپنی ان روبوٹس کو مختلف شعبہ جات کیلئے استعمال کرنا چاہتی ہے ۔

ٹیسلا کمپنی کی جانب سے روبوٹ کے پروٹو ٹائپ ماڈل کو 30 ستمبر تک متعارف کروائے جانے کا امکان ہے ۔ اس روبوٹ ماڈل کی پہلی جھلک اگست 2021 ء میں کمپنی کے اے آئی ڈے کے موقع پر دکھائی گئی تھی ۔

ایونٹ کے موقع پر ایلون مسک نے کہا تھا کہ وہ روبوٹس کو گھروں میں دوست کے طور پر استعمال کرنے کے بھی خواہشمند ہیں ۔ انہوں نے کہا تھا کہ "ٹیسلا دنیا کی سب سے بڑی روبوٹکس کمپنی ہے کیونکہ ہماری کمپنی میں تیار ہونے والی گاڑیاں بھی تو روبوٹس جیسی ہی ہیں "

دوسری جانب ٹیسلا کمپنی کی ویب سائٹ پر اس نئے روبوٹ کے حوالے سے لکھا گیا ہے کہ وہ اے آئی ٹیکنالوجی سے لیس ہوں گے جبکہ روبوٹس انتہائی مشکل اور لوگوں کیلئے بے زار کن کام بھی آسانی سے کر سکیں گے ۔

ایلون مسک نے جنوری 2022 ء میں کہا تھا کہ انسان نما روبوٹس کو ٹیسلا پلانٹس میں استعمال کیا جائے گا ۔ انہوں نے کہا تھا کہ وقت کے ساتھ ساتھ گاڑیوں کے بجائے روبوٹس ٹیسلا کیلئے زیادہ اہمیت کے حامل ہوں گے ، جو افرادی قوت کی کمی کا بھی بہترین حل ثابت ہوں گے ۔

ٹیسلا کی جانب سے ابھی تک گاڑیوں کی پروڈکشن کیلئے روبوٹس استعمال کئے جا رہے ہیں مگر وہ ٹیسلا بوٹ جتنے زیادہ جدید نہیں ہیں ۔

 

صارفین کی انٹرنیٹ سرگرمیوں کی مبینہ ٹریکنگ پرمیٹا کومقدمےکاسامنا