• Tuesday, 29 November 2022
کورونا کا پتہ لگانے والا ماسک تیار

کورونا کا پتہ لگانے والا ماسک تیار

شنگھائی(نیاٹائم)سائنس دانوں نے ایک ایسا ماسک بنایاہے جو دس منٹ کے اندرکورونا وائرس کا پتہ لگا سکتا ہے۔

 

انتہائی حساس فیس ماسک اس وائرس کی ہوا میں تشخیص کر کے ماسک استعمال کرنےوالے کو انکے فون میں ایک ایپ کے ذریعے آگاہ کرتا ہے۔کورونا وائرس کے علاوہ ماسک میں سوائن فلو اور برڈ فلو کی تشخیص کی بھی کرتا ہے۔یہ بیماریاں ہوا میں متاثرہ افراد کے بولنے،کھانسنے یا چھینکنے کے باعث خارج ہونے والے چھینٹوں کی وجہ سے پھیلتی ہیں۔یہ باریک اور نہ نظرآنےوالے مالیکیول ہوا میں کافی عرصے تک موجود رہتے ہیں اور اس ہوا میں سانس لینے کے سبب لوگ بیمار پڑتے ہیں۔

 

چین میں ریسرچرز نے اس ماسک کا تجربہ ایک بند چیمبر میں کیا جہاں ماسک پر وائرس پروٹینز کا مائع اسپرے کیا گیا تھا۔سینسر نے صرف زیرو عشاریہ تین مائیکرو لیٹر مائع چھڑکنے پر ہی وائر کے حوالے سے خبردارکیا۔ یہ مقدار چھینک سے بننے والے چھینٹوں سے 70 سے 560 گُنا تھوڑی جبکہ کھانسنے یا بات کرنے کی وجہ سےاس سے بھی کم قطرے وجود میں آتے ہیں۔ماسک میں لگے سینسر میں ایپٹامرزدستیاب ہیں۔ یہ ایک قسم کا سائنتھیٹک مالیکیول ہے جو پیتھوجنز میں موجود پروٹینز کو پوائنٹ آؤٹ کرتا ہے۔

 

سائنس دانوں نے جن ماسک کی آزمائش کی ان میں موجود ایپٹامرز کووڈ-19، سوائن فلو اور برڈ فلو کا پتہ لگا سکتے ہیں۔ریسرچ کے ایک مصنف ڈاکٹر یِن فینگ، جوشینگھائی ٹونگجی یونیورسٹی میں کام کرتے ہیں، کا کہنا تھا کہ پچھلے مطالعے میں بتایا گیا تھا کہ فیس ماسک بیمارے کے پھیلنے کے چانسز کو کم کردیتا ہے۔انہوں نے کہا کہ ہم ایسے ماسک تیار کرنا چاہتے تھے جو ہوا میں موجود وائرس کی موجودگی سے خبردار کرے اور ماسک پہننے والا محتاط ہوجائے۔

 

کراچی میں ڈینگی کےڈنک جاری،مزیددواموات رپورٹ