• Thursday, 29 September 2022
آرمی چیف کی تعیناتی کیلئے سزا یافتہ شخص سے کیسے مشاورت ہو سکتی ہے ، فواد چوہدری

آرمی چیف کی تعیناتی کیلئے سزا یافتہ شخص سے کیسے مشاورت ہو سکتی ہے ، فواد چوہدری

اسلام آباد (نیا ٹائم) پاکستان تحریک انصاف کے رہنما و سابق وفاقی وزیر فواد چوہدری کا کہنا ہے آرمی چیف کی تعیناتی کیلئے سزا یافتہ شخص سے کیسے مشاورت کی جا سکتی ہے ، اداروں کو سوچنا ہو گا کہ عزت کیسے برقرار رکھی جا سکتی ہے ۔

انہوں نے کہا کہ اس وقت جو صورتحال ہے وہ انتخابات یا انقلاب میں سے کسی ایک طرف جائے گی ۔ پنجاب کابینہ اور پارلیمانی پارٹی حقیقی آزادی کیلئے عوام کے ساتھ کھڑی ہو ، نئے انتخابات پاکستان کا  سب سے اہم مسئلہ ہیں ۔

فواد چوہدری نے کہا کہ مہنگائی کے باعث عوام کی کمر ٹوٹ گئی ہے ، معاشی بحالی سیاسی استحکام سے ہی ممکن ہے ۔ ملک آئین کے مطابق چلتا ہے ، پی ڈی ایم کی طرف سے جو عبوری   حکومت کو چھ سے سات ماہ دینے کا کہا گیا ہے ایسے ملک نہیں چلے گا ۔

انہوں نے کہا کہ امید ہے دوبارہ معاملہ لانگ مارچ تک نہیں جائے گا ۔ انتخابات پاکستان تحریک انصاف سے زیادہ پاکستان کامسئلہ ہیں ، پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ انتخابات کیلئے راضی ہو تو باقی فریم ورک ان کے ساتھ بیٹھ کر طے کر لیں گے ۔

رہنما پاکستان تحریک انصاف فواد چوہدری نے کہا کہ اداروں کے سیاسی کردار کو  کم کرنا ان کے مفاد میں ہے ۔ اداروں  کا اس وقت بھی سیاست میں بہت بڑا کردار ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ضرورت اس امر کی ہے کہ سیاست جماعتیں اور ادارے ایک پیج پر ہوں ، مذاکرات ہوں یا بات چیت عوام اور میڈیا کے سامنے ہونی چاہئے ، اب بند کمروں میں فیصلوں کا وقت گزر چکا ہے ۔

 

سیلاب متاثرین کی جلد بحالی کرینگے ، شہباز شریف