ہوا میں معلق ہوکر سفر کرنےوالی گاڑیوں کی ویڈیووائرل

ہوا میں معلق ہوکر سفر کرنےوالی گاڑیوں کی ویڈیووائرل

چین(نیاٹائم ویب ڈیسک)فضا میں معلق ٹرینوں سے متاثر ہوکر چین میں سائنسدانوں نے معلق یا ماگلیو گاڑیوں کی تیاری پر کام کا آغازکردیا ہے۔یہ گاڑیاں خاص  مقناطیسی سڑک پر فضا میں معلق ہوکر تیزرفتاری سے سفر کرپائیں  گی۔یہ گاڑیاں فضا میں ساڑھے 3 سینٹی میٹر بلندی پر معلق ہوکرسفرکریں گی۔

 

رپورٹس کے مطابق اگر یہ ٹیکنالوجی عملی شکل اختیار کرنے میں کامیاب رہی تو فضا میں تیرتی ہوئی محسوس ہونے والی گاڑیاں بہت تیزی  کے ساتھ  سفر کرپائیں  گی۔ماگلیو ٹرینوں کو متاثر کن رفتار  کے باعث جانا جاتا ہے اور کچھ ملک  جیسے جاپان میں ایسی ایک ٹرین600 کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے بھی سفر کرنے کی  طاقت  رکھتی ہے۔ایسی گاڑی کی آزمائش کی ویڈیو بھی سوشل میڈیا سائٹ پر پوسٹ  کی گئی جس میں مشرقی چین کی ایک مخصوص سڑک  میں گاڑی کو فضا میں معلق ہوکر چلتے ہوئے بھی دکھایاگیا ہے۔

 

مجموعی طور پر 8 گاڑیوں  کی آزمائش کی جارہی ہے۔اب تک 2 ٹیسٹ کیے گئے ہیں  جن میں سے ایک 230 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے کیا گیا۔ابھی یہ چیز  واضح نہیں  ہے کہ ماہرین کی  طرف سے منصوبے کو کیسے آگے بڑھایا جائے گا، لیکن  یہ عندیہ ملتا ہے کہ ٹیسٹ سے حکام کو ایسی گاڑیوں کے روڈ ڈیزائن اور تیزرفتاری سے سفر کرنے کی صلاحیت جانچنے کا موقع  بھی ملےگا۔

 

آنجہانی ملکہ برطانیہ کی آخری رسومات بڑی سکرین پردکھائی جائیں گی