ایف آئی اے کی جنرل ریٹائرڈ امجد شعیب سے تفتیش

ایف آئی اے کی جنرل ریٹائرڈ امجد شعیب سے تفتیش

اسلام آباد (نیا ٹائم) وفاقی تحقیقاتی ادارے ایف آئی اے نے لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ امجد شعیب سے تفتیش کی ہے ، ایف آئی اے حکام نے ان کے وی لاگ پر تفتیش کی ہے ۔

ذرائع کے مطابق لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ امجد شعیب کو ایف آئی اے آفس میں طلب کیا گیا تھا جہاں ان سے ڈپٹی ڈائریکٹر ایف آئی اے ایاز خان کی سربراہی میں قائم 5 رکنی ٹیم نے پوچھ گچھ کی ۔

ذرائع کے مطابق جنرل ریٹائرڈ امجد شعیب سے ایف آئی اے ٹیم نے تقریباً 5 گھنٹے تک تفتیش کی اور ان سے سوال و جواب کئے ، ان کا موبائل فون بھی لے کر اس سے ڈیٹا حاصل کیا گیا ہے ۔

دوسری طرف لیفٹینٹ جنرل ریٹائرڈ امجد شعیب نے نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایف آئی اے نے انہیں 14 ستمبر کو طلب کیا تھا تاہم وہ نوٹس ملنے پر رضا کارانہ طور پر خود ہی 9 ستمبر کو ایف آئی اے آفس چلے گئے ۔

انہوں نے کہا کہ ایف آئی اے ٹیم نے ان سے پیشہ وارانہ انداز میں سوال و جواب کئے ، ان سے قطر میں پاکستانی و اسرائیلی طیارے سے متعلق ان کے وی لاگ پر سوال کئے گئے ۔

جنرل ریٹائرڈ امجد شعیب نے کہا کہ میں نے اپنی ویڈیو میں بھی کہا تھا کہ دفتر خارجہ اس پر وضاحتی بیان جاری کرے ۔

واضح رہے جنرل ریٹائرڈ امجد شعیب نے اپنے وی لاگ میں وزیر اعظم کی خلیجی ملک کے دورے کے دوران اسرائیلی وفد سے مبینہ ملاقات کی خبر دی تھی ۔

 

لیگی قیادت کے خلاف مقدمات سے انکار پر ڈی جی اینٹی کرپشن تبدیل