• Tuesday, 29 November 2022
ملک میں سیلاب سے کپاس کی فصل تباہ ہوگئی

ملک میں سیلاب سے کپاس کی فصل تباہ ہوگئی

لاہور(نیاٹائم)ملک میں سیلاب کی وجہ سے کپاس کی فصل کو شدید نقصان پہنچا ہے، ساڑھے 16 لاکھ ایکڑ سے زائد رقبہ پر کاشت کپاس کی فصل سیلاب کی نظر ہوگئی جس سے فیصل آباد کی ٹیکسٹائل انڈسٹری کیلئے بھی مشکلات پیدا ہونے لگیں۔

 

 شدید بارشوں، ژالہ باری اور سیلاب کے وجہ سے بلوچستان میں سو فیصد، سندھ میں اسی فیصد جبکہ پنجاب میں تیس فیصد سے زائد کاٹن کی فصل تباہ ہوئی ہے۔پیداواری ٹارگٹ ایک کروڑ دس لاکھ بیل سے کم ہوکر صرف ساٹھ لاکھ بیل تک رہ گیا ہے۔ کاٹن ریسرچرمحمد رضوان کا کہنا ہے کہ روئی کی خشک فصل ہوتی ہے، اگرکپاس کے کھیت میں چوبیس گھنٹے سے زیادہ پانی کھڑا رہے تو پودا خراب ہونے لگ جاتا ہے، ہماری تقریباً چالیس سے پچیس فیصد فصل مکمل تباہ ہوگئی ہے اور اگر پانی جلدی نہ اترا تو اگلی فصلوں کو بھی شدید نقصان پہنچے گا۔

 

کپاس کی فصل تباہ ہونے سے فیصل آباد کی ٹیکسٹائل انڈسٹری کیلیے مشکلات بھی بڑھ گئی ہیں۔کپاس کی تباہی سے فیصل آباد کے صنعتکار بھی پریشانی کا شکار ہیں اور دھاگے کی پرائسز میں تیس فیصد سے زائد کا اضافہ ہوگیا ہے۔ چیمبر آف کامرس کے صدرنے کہاہے کہ ابھی سے دھاگے کے بیگ میں آٹھ سے دس ہزار روپے کا اضافہ ہوا ہے۔کاٹن ریسرچرز کے مطابق سیلاب زدہ علاقوں میں اگلے ایک سال تک زمین کپاس کی فصل اگانے کے قابل نہیں رہ سکے گی۔

 

لاکھوں ٹن گندم خراب؛ سیلاب زدہ علاقوں میں خوراک کا بحران پیدا ہو گیا