لیگی رہنماؤں کے گرد گھیرا تنگ ہوگیا

لیگی رہنماؤں کے گرد گھیرا تنگ ہوگیا

لاہور(نیاٹائم)وزیراعظم شہبازشریف کے اسپیشل اسسٹنٹ عطا تارڑ سمیت بارہ لیگی رہنماؤں کے وارنٹ گرفتاری جاری کر دیے گئے ہیں۔

 

لاہور پولیس کی طرف سے مسلم لیگ ن کےبارہ رہنماؤں کو گرفتار کرنے کی پرمیشن کیلئے مجسٹریٹ کو درخواست دی تھی۔ پولیس نے درخواست میں عطا تارڑ، رانا مشہود، اویس لغاری اور سیف الملوک کھوکھر سمیت دیگر لیگی رہنماؤں کے وارنٹ گرفتاری جاری کرنے کی استدعا کی تھی۔مجسٹریٹ کو دی گئی درخواست میں موقف اختیار کیا گیا کہ ملزمان کے خلاف کیسز درج ہیں، ملزمان دانستہ طورحاضرنہیں ہورہے، ملزمان کو گرفتار کرکے انوسٹی گیشن مکمل کرنی ہے لہٰذا ان کی وارنٹ گرفتاری جاری کریں۔ جوڈیشل مجسٹریٹ نے پولیس کی درخواست منظورکرتے ہوئے ن لیگ کے بارہ رہنماؤں کے وارنٹ گرفتاری ایشو کردیے ہیں۔پنجاب اسمبلی میں ہنگامہ آرائی کے کیس میں مسلم لیگ ن کے رہنماؤں کے وارنٹ جاری کیے گئے ہیں۔

 

خیال رہے کہ چند دن پہلے لاہور میں مسلم لیگ ن کے رہنما عطا تارڑ اور رانا مشہود کے گھروں پر پولیس نے ریڈ کیا گیا تھا تاہم دونوں افراد گھر پر موجود نہ ہونے کی وجہ سے گرفتارسے بچ گئے تھے۔ جبکہ عطاء تارڑ نے چھاپے پر ردعمل دیتے ہوئے کہا تھا کہ بغیر وارنٹ کے چھاپہ مارا گیا اور وہ بھی اس گھر پر جہاں میں پندرہ سال پہلے رہتا تھا، حکومت سیاسی انتقام پر اتر آئی ہے۔

 

پولیس نے ن لیگ کے بارہ رہنماؤں کی گرفتاری کیلئے درخواست جمع کرادی