راہول اورپریانکاگاندھی کواحتجاج کرنامہنگاپڑگیا

راہول اورپریانکاگاندھی کواحتجاج کرنامہنگاپڑگیا

نئی دلی(نیاٹائم ویب ڈیسک)بھارت میں مہنگائی اور  بیروزگاری کے خلاف کانگریس کی طرف سے کیے جا رہے ملک گیر احتجاج کے دوران جماعت  کے مرکزی رہنماء اور ممبر لوک سبھا راہول گاندھی سمیت کئی  رہنماؤں کو بھی  گرفتار کر لیا گیا ہے۔

 

انڈین  میڈیا کے مطابق مودی سرکار نے حزب اختلاف  کے احتجاج کے پیش نظر نئی دلی میں دفعہ 144 نافذ کر رکھی ہے لیکن اس کے باوجود کانگریس کارکنان کی جانب سے نئی دلی میں کانگریس کے مرکزی آفس کے باہر مہنگائی اور بے روز گاری کے خلاف احتجاج کیا گیا۔کانگریس رہنماء راہول گاندھی کا احتجاج سے خطاب کرتے ہوئے کہنا تھا انڈیاکا کوئی بھی آئینی ادارہ آج آزاد نہیں ہے، اسمبلی  میں بھی  ہمیں بولنے نہیں دیا جاتا اور گرفتار کر لیا جاتا ہے۔

 

کانگریس اراکین کی طرف سے پارلیمنٹ کی راشٹر پتی بھون تک مارچ کی کوشش کی گئی جس پر پولیس نے راہول گاندھی اور پریانکا گاندھی سمیت کئی پارٹی رہنماؤں کو حراست میں لے لیا۔انڈین  میڈیا کے مطابق نئی دلی کی خواتین پولیس اہلکاروں نے پریانکا گاندھی کو گھسیٹ کر گاڑی  میں ڈالا اوراپنےہمراہ لے گئیں۔

 

نائٹ کلب میں آتشزدگی13زندگیاں نگل گئی