پنجاب اسمبلی میں تحریک انصاف کی نشستوں میں اضافہ کیسے ہوا

پنجاب اسمبلی میں تحریک انصاف کی نشستوں میں اضافہ کیسے ہوا

لاہور (نیاٹائم) الیکشن کمیشن کی جانب سے پنجاب اسمبلی کی پانچ مخصوص نشستوں کا نوٹیفکیشن جاری ہونے کے بعد تحریک انصاف کے اراکین نے حلف اٹھالیا ہےجس کےبعدایوان میں پی ٹی آئی کی نشستوں میں اضافہ ہوگیاہے ۔

 

اسمبلی ذرائع کے مطابق سپیکر پرویز الٰہی کی زیر صدارت پنجاب اسمبلی کے اجلاس میں پی ٹی آئی کے 5 نومنتخب اراکین نے حلف اٹھایا ، حلف اٹھانے والوں میں خواتین نشستوں پر بتول زین، سائرہ رضا ،فوزیہ عباس ، اقلیتی نشستوں پر حبکوک رفیق اور سیموئیل یعقوب کے نام سامنے آئےہیں ۔

 

وزارت اعلی کے انتخاب میں حمزہ شہباز کو ووٹ دینے والے پی ٹی آئی کے 25 ارکان اسمبلی ڈی سیٹ ہوئے جس کے بعد پنجاب اسمبلی ممبران کی تعداد 346 رہ گئی۔اس وقت پنجاب اسمبلی میں حکومتی جماعت (ن) لیگ کے پاس 166 سیٹیں ہیں جب کہ پیپلزپارٹی کے7، تین آزاد اور ایک راہ حق پارٹی کا ووٹ بھی (ن) لیگ کے پاس ہے، اس طرح (ن) لیگ کے حکومتی اتحادکے ووٹوں کی تعداد 177 بتائی جارہی ہے۔

 

واضح رہےکہ 2018کے الیکشن میں پی ٹی آئی کوپنجاب اسمبلی میں183 نشستیں ملی تھیں لیکن 25 منحرف ارکان کے ڈی سیٹ ہونے کے بعد پی ٹی آئی کی نشستیں 158 رہ گئیں ہیں۔اس وقت پنجاب اسمبلی میں پی ٹی آئی کے 158 اور (ق) لیگ کے 10 ارکان ملا کر اپوزیشن کے 168 ارکان بنتے ہیں ، پی ٹی آئی کو 5 مخصوص نشستیں ملنے کےبعد اپوزیشن اتحادکی تعداد173بنتی ہے یعنی مخصوص نشستوں کے بعد بھی حکومتی اتحاد کو اپوزیشن پر 4 ووٹوں کی برتری حاصل رہے گی۔

 

اندھے قتل کا معمہ حل ، ٹک ٹاکر خاتون شوہر کے قتل میں ملوث نکلی