پی ٹی آئی نے گرینڈ ڈائیلاگ پر مشروط آمادگی ظاہر کر دی

پی ٹی آئی نے گرینڈ ڈائیلاگ پر مشروط آمادگی ظاہر کر دی

اسلام آباد (نیا ٹائم ) پاکستان تحریک انصاف کے سینئر مرکزی نائب صدر فواد چوہدری نے کہا ہے پاکستان تحریک انصاف گرینڈ ڈائیلاگ کیلئے تیار ہے تاہم اس سے قبل نئے انتخابات کی تاریخ دی جائے ۔

اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے  فواد چوہدری نے کہا کہ حکومت پے در پے ایسی حرکتیں کر رہی ہے کہ جس سے جمہوریت ہی ملیا میٹ ہو جائے ۔ ہر دوسرے روز حکومت کا نیا سکینڈل سامنے آ رہا ہے ، سولر  پاور بھی ایک سکینڈل ہے جس کی مکمل تحقیقات ہونی چاہئیں ۔

فواد چوہدری نے کہا کہ ہمارے کسی وزیر پر کرپشن کا کوئی ایک بھی کیس نہیں ۔ ہمارے دور میں جو کچھ کیپٹن صفدر کے ساتھ ہوا وہ سندھ حکومت نے کیا ، سندھ میں 2 صحافی قتل ہوئے اور سیاستدانوں کے خلاف مقدمات بھی درج ہوئے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم تمام سیاسی مسائل حل کرنا چاہتے ہیں تاہم اس کیلئے پہلے نئے انتخابات کی تاریخ دی جائے ۔

انہوں نے وفاقی وزیر مریم اورنگزیب سے سوال کرتے ہوئے کہا کہ آپ کے شوہر آسٹریلوی شہری ہیں ، جو پاکستان میں ٹوبیکو انڈسٹری کی نمائندگی کرتے ہیں ۔ پچھلی دفعہ آپ  کے کہنے پر ٹوبیکو صنعت کو اربوں روپے کی مراعات دی گئیں ، آپ کی لابی کے باعث فارن کمپنیوں کو رعایت دی گئی ، اب علی ترین اور مریم اورنگزیب کی لابی کے باعث دوبارہ ٹوبیکو انڈسٹری کر اربوں روپے کی ٹیکس مراعات دی جائیں گی ۔

رہنما پاکستان تحریک انصاف شیریں مزاری نے کہا کہ گرینڈ ڈائیلاگ تو وہ کریں جو عوامی مینڈیٹ کے ساتھ آئیں ، پارلیمان میں کوئی بھی اپوزیشن جماعت نہیں ، ملک کی سب سے بڑی جماعت پارلیمنٹ سے باہر ہے ۔

شیریں مزاری نے کہا کہ موجودہ حکومت نے لاقانونیت کی انتہا کر دی ہے ، اگر آپ نے مارشل لاء ہی لگانا ہے تو صاف کہہ دیں ، ہم جہاں جائیں راستے میں گاڑی روک لی جاتی ہے اور گھسیٹ کر بندے کو غائب کر دیا جاتا ہے ۔

 

وزیر اعظم نے گوادر واٹر پراجیکٹ کی تحقیقات کا حکم دیدیا