بچی گھر سے سودا لینے نکلی لیکن زندہ واپس نہ آئی

بچی گھر سے سودا لینے نکلی لیکن زندہ واپس نہ آئی

پشاور(نیاٹائم)صدرریلوے کالونی میں 11 سالہ بچی کی لاش ایک خالی پلاٹ سے ملی ہے، جس کے بعد پولیس نے انوسٹی گیشن کا آغاز کردیا ہے۔

 

اطلاعات کے مطابق بچی گھرسے چند گز کے فاصلے پر کالونی میں موجود ایک سمال شاپ سے سودا لینے گئی تھی لیکن چند گھنٹوں بعد بچی کی لاش کالونی کے ایک پلاٹ میں پڑی ملی، بچی کی شناخت ماہنور کے نام سے سامنے آئی ہے اور واقعے کی رپورٹ تھانہ شرقی میں درج ہوچکی ہے۔

 

بچی کے والد محمدنذیر کے مطابق بچی کو گھرکے نزدیک شاپ سے سودا لینے کیلئے بھجوایا تھا تاہم وہ واپس نہ آئی، رات کے وقت بچی کی لاش ملی، بچی کے سر پرتازہ زخم کے نشانات موجود تھے اور گلے پردوپٹہ سے پھندا لگانے کے واضح نشانات پائے گے۔ پولیس حکام کے مطابق کالونی میں مجموعی طور پرچالیس گھر ہیں جس میں ملک کے مختلف ایریاز کے جاب ہولڈر رہائش پذیر ہیں۔

 

پشاورپولیس کے سینئرآفیسر کے مطابق ماہنور کیس میں کرائم سین سے ثبوت اکھٹے کرلیے گئے ہیں اوربچی کی لاش پوسٹ مارٹم کیلئے بھجی گئی ہے، حتمی طور پربچی کیساتھ زیادتی کے متعلق ابھی کچھ نہیں کہا جاسکتا، میڈیکل رپورٹ آنے کے بعد کیس کی انوسٹی گیشن کو مزید بڑھا دیا جائے گا۔

 

خاتون مسافر بس میں مبینہ زیادتی کا شکار