کراچی پولیس اور پی ٹی آئی ورکرز آمنے سامنے آ گئے

کراچی پولیس اور پی ٹی آئی ورکرز آمنے سامنے آ گئے

کراچی (نیا ٹائم) شہر قائد میں چیئرمین پاکستان تحریک انصاف کے اسلام آباد جلسے سے خطاب دیکھنے کیلئے سی ویو پر بڑی سکرین لگانے کے معاملے پر پاکستان تحریک انصاف کے کارکن اور پولیس آمنے سامنے آ گئے ۔

پاکستان تحریک انصاف کے اسلام آباد کے پریڈ گراونڈ میں ہونے والے جلسہ کے دوران عمران خان کا خطاب کراچی کے سی ویو پر براہ راست دکھانے کیلئے  بڑی سکرین  لگانے کا اہتمام کیا جا رہا تھا جسے کراچی پولیس نے رکوا دیا ، جس کے بعد پولیس نے پی ٹی آئی کارکنوں کو سکرین لگانے سے روک کر سامان سمیت دیگر گاڑیاں سی ویو کی جانب جانے سے روک دیں ۔

پاکستان تحریک انصاف کے رہنما و سابق گورنر سندھ عمران اسماعیل ، سابق وفاقی وزیر علی زیدی ، فہیم خان ، بلال غفار ، جمال صدیقی ، شہزاد قریشی سمیت دیگر رہنما بھی موقع پر موجود تھے ۔ ذرائع کے مطابق سابق وفاقی وزیر علی زیدی سمیت دیگر رہنماوں کی پولیس کے ساتھ دھکم پیل بھی ہوئی ۔ جس کے بعد پاکستان تحریک انصاف کے رہنماوں نے گاڑیاں پولیس سے چھڑوا لیں ۔

اس موقع پر علی زیدی اور پولیس حکام کے مابین کافی تلخ کلامی بھی ہوئی تاہم بعدازاں سابق وفاقی وزیر علی زیدی پولیس رکاوٹوں کو خاطر میں نہ لاتے ہوئے کنٹینر کو خود ڈرائیور کرتے ہوئے سی ویو پہنچانے میں  کامیاب ہو گئے ۔

 

تحریک انصاف آج شہر اقتدار میں عوامی قوت کا مظاہرہ کرے گی