زکریا ایکسپریس زیادتی کیس میں بڑا انکشاف

زکریا ایکسپریس زیادتی کیس میں بڑا انکشاف

 کراچی(نیاٹائم)بہاؤ الدین زکریا ایکسپریس میں خاتون سے اجتماعی زیادتی کے مقدمے میں بڑے انکشافات سامنے آگئے، تینوں زیرحراست ملزمان کے ڈی این اے میچ کرگئے ہیں جس کے بعد جوڈیشل مجسٹریٹ نے چالان سماعت کیلئے منظور کرلیا ہے۔

 

کراچی سٹی کورٹ میں جوڈیشل مجسٹریٹ سید انور شاہ کی عدالت کے روبرو بہاؤ الدین زکریا ایکسپریس میں خاتون سے اجتماعی زیادتی کیس کی سماعت کی گئی۔ زیرحراست تین ملزمان کا ڈی این اے متاثرہ خاتون سے میچ ہوگیا ہے۔چالان کے متن کے مطابق متاثرہ خاتون 26 مئی 2022 کو بچوں سے ملنے کراچی سے ملتان روانہ ہوئی تھی۔ ستائیس مئی کو ملتان سے واپس بہاؤ الدین زکریا ٹرین میں واپسی پر ٹکٹ چیکر زاہد متاثرہ خاتون کو اکنامی سے اے کلاس انچارج عاقب کی طرف لے گیا تھا۔

 

تھوڑی دیر بعد ٹکٹ چیکر زاہد نے خاتون کو اے کلاس کا کرایہ زیادہ بتاکر مزید پیسے مانگے۔ متاثرہ خاتون نے اکنامی کلاس میں واپس جانے کی درخواست کی تو ملزم زاہد لال پیلا ہوگیا۔ ملزم زاہد نے خاتون کو تھپڑ مارے اور پھر زیادتی کی۔ اسکے بعد ملزم عاقب نے بھی متاثرہ خاتون کو زیادتی کا نشانہ بنایا۔

 

کیس کے تیسرے ملزم زوہیب نے خاتون کو چلتی ٹرین میں اپنی حوس کا شکار کیا۔ کورٹ نے ملزمان کیخلاف کیس کا چالان منظور کرلیا ہے۔ ملزمان کیخلاف ریلوے کراچی سٹی تھانے میں مقدمے کا اندراج کیا گیا ہے۔

 

خاتون کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنانے والے ملزم کو دھر لیاگیا