سندھ حکومت کا بند اسکولز کے متعلق بڑا فیصلہ

سندھ حکومت کا بند اسکولز کے متعلق بڑا فیصلہ

کراچی(نیاٹائم)سندھ حکومت نے گیارہ ہزاربند اسکول کے متعلق بڑا فیصلہ کرتے ہوئے انہیں اوپن کرنے کا اعلان کردیا ہے۔

 

سندھ کے وزیرتعلیم سید سردارشاہ کا کہنا ہے کہ گورنمنٹ صوبے میں بند گیارہ ہزار سرکاری اسکول اوپن کرنے جا رہی ہے۔ یہ اسکول ٹیچرز کی کمی کے باعث بندکیے گئے تھے۔ اب یکم اگست سے انہیں اوپن کردیا جائے گا۔ ان اسکولوں میں فرنیچردستیاب نہیں تھے جو اگست سے قبل پہنچا دیا جائے گا۔سندھ اسمبلی میں اظہارخیال کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ صوبے میں اکتالیس ہزار سرکاری پرائمری اسکول ہیں۔ ان میں سے 5000 غیرفعال اسکول ہیں۔ یہ اسکول ہمارے لیے نقصان دہ ہیں۔ ایک ایک گاؤں میں بیس بیس اسکول ہمارے گلے کی ہڈی بن چکے۔ ان کا بوجھ خزانے کو برداشت کرنا پڑتا ہے۔

 

صوبائی وزیر کا کہنا ہے کہ سندھ کے سرکاری اسکولوں میں 750 میوزک ٹیچر تعینات کیے جائیں گے۔ انہوں نےکہ صوبے میں پینسٹھ لاکھ بچے اسکول سے باہر ہونے کے اعداد و شمار بلکل غلط ہیں۔ یہ تعداد چالیس سے پینتالیس لاکھ کے مابین ہے۔ان کا کہنا ہے کہ ہمارا ہدف پانچ ہزاراسکولوں کی اپ گریڈیشن ہے۔ بچوں کو اسکولوں میں دیکھنا چاہتے ہیں۔ ہمارے پاس کوئی بھی سائنس میوزیم دستیاب نہیں۔ صرف اسلام آباد میں سائنس میوزیم کی سہولت موجود ہے۔ ہر ڈویژنل ہیڈکوارٹرمیں سائنس میوزیم۔بنانے کا پلان فراہم کرچکے ہیں۔

 

گورنرہاؤس میں منعقدہ اجلاسوں میں 22 یونیورسٹیوں کے بجٹ منظور