سابق وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدارکےچاربھائیوں نےضمانت کروالی

سابق وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدارکےچاربھائیوں نےضمانت کروالی

لاہور (نیاٹائم) نو سو کنال اراضی کی غیر قانونی ایڈجسٹمنٹ کے دو کیسز میں نامزد سابق وزیراعلیٰ پنجاب کے چار بھائیوں نے اینٹی کرپشن کورٹ لیہ سے عبوری ضمانت کرا لی ہے، عدالت نے ایک ایک لاکھ کے مچلکوں کے عوض چاروں ملزموں کی دو جولائی تک ضمانت منظور کی ہے۔

 

سابق وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار سمیت نو سو کنال اراضی کی ناجائز ایڈجسٹمنٹ کے دو کیسز میں نامزد سابق وزیراعلیٰ کے چار بھائیوں عمر بزدار، طاہر، ایوب اور جعفر بزدار نے اینٹی کرپشن ڈیرہ غازیخان ڈویژن کی لیہ کورٹ سے عبوری ضمانت کروا لی ہے۔ چاروں ملزموں  نے ہائیکورٹ ملتان بینچ سے حفاظتی ضمانت حاصل کروا رکھی تھی جسکی آج لاسٹ ڈیٹ  تھی۔

 

مقررہ وقت کے خاتمے سے پہلے چاروں ملزم اینٹی کرپشن جج نوید احمد کی عدالت میں پیش ہوئے۔ درخواستوں پر سماعت کے بعد اینٹی کرپشن جج نے ایک ایک لاکھ کے مچلکے جمع کرانے کا حکم صادر کرتے ہوئے تمام ملزموں کی دو جولائی تک ضمانت منظور کر لی اور مقدمہ واپس ڈی جی خان کی اینٹی کرپشن کورٹ میں شفٹ  کر دیا۔

 

ملزموں  کیخلاف اینٹی کرپشن تھانہ ہیڈ کوارٹرز ڈیرہ غازیخان میں دو کیسزدرج ہیں جس میں سابق وزیراعلیٰ اور انکے 4 بھائیوں سمیت ریونیو سٹاف کیخلاف نو سو کنال اراضی کی 1982 میں ناجائز ایڈجسٹمنٹ کرانے کا الزام لگایا ہے۔ کیسز میں سابق وزیر اعلیٰ عثمان بزدار نے ہائیکورٹ بہاولپور بینچ سے حفاظتی ضمانت حاصل کر رکھی ہے۔

 

سندھ حکومت کا 11 ہزار بند سکولز کھولنے کا اعلان