باغیوں کا گاوں پر حملہ 100 سے زائد افراد ہلاک ، متعدد زخمی

باغیوں کا گاوں پر حملہ 100 سے زائد افراد ہلاک ، متعدد زخمی

ادیس ابابا (نیا ٹائم ویب ڈیسک)مشرقی افریقی ملک ایتھوپیا میں باغی جنگجووں نے اقلیتی آبادی کے گاوں پر حملہ کر دیا ، 100 سے زائد افراد ہلاک جبکہ درجنوں زخمی ہو گئے ۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق افریقی ملک ایتھوپیا کے اورومو ریجن میں باغی جنگجوؤں نے امہارا اقلیت کی بستی میں گھس کر قتل عام کرتے ہوئے 100 افراد کو ہلاک کر دیا جبکہ درجنوں کو زخمی بھی کیا ۔

عینی شاہدین کے مطابق باغی جنگجووں نے آبادی میں گھس کر اندھا دھند گولیاں برسائیں ۔ حملہ آوروں نے بچوں اور خواتین کو بھی نہ بخشا اور انہیں بھی بیدردی سے قتل کیا ۔

ریسکیو اداروں کے مطابق ریسکیو کارروائیوں کے دوران 100 سے زائد افراد کی لاشیں اٹھائی گئی ہیں جبکہ اتنے ہی زخمی ہیں ۔ دوسری طرف آزاد ذرائع کا دعویٰ ہے کہ فائرنگ اور حملے کے واقعہ میں ہلاکتوں کی تعداد 200 سے زائد ہے ۔

عینی شاہدین بھی ہلاکتوں کی تعداد 200 سے زائد بتا رہے ہیں جبکہ ہلاک ہونے والوں کی اجتماعی تدفین کی تیاریاں کی جا رہی ہیں ۔

حکومت نے حملہ کی ذمہ داری اورومو لبریشن آرمی پر عاءد کی ہے ، علیحدگی پسند باغی تنظیم اس سے قبل بھی اقلیتی برادری امہارا پر حملوں میں ملوث رہی ہے ۔

دوسری جانب اورومو لبریشن آرمی کے ترجمان نے حکومتی الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ ان حملوں میں ملوث نہیں ، جبکہ اومورو لبریشن آرمی کے ترجمان نے حملے کی ذمہ داری وزیر اعظم ابی احمد پر ڈالتے ہوئے کہا ہے کہ انہوں نے اپنے جرم کا الزام ہم پر لگانے کی کوشش کی ہے ۔

 

افغان  طالبان نے 5 برطانوی شہریوں کو رہا کر دیا