ڈالرکی تیز رفتار جاری

ڈالرکی تیز رفتار جاری

 کراچی(نیاٹائم)ڈالرکی تیزرفتارجاری جس کے بعد انٹربینک مارکیٹ میں ڈالرنئی ریکارڈ سطح پرپہنچ چکا ہے۔

 

ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ ڈالرکی انٹربینک مارکیٹ قیمت دو سوگیارہ روپے سے اوپرچلی گئی۔ بزنس ہفتے کے پہلے دن ڈالر 2.46 روپے اضافے سے 211.20 روپے تک پہنچ گیا ہے۔ ماہرین کا خیال ہے کہ پاکستانی روپیہ کی قدر کا دارومدارآئی ایم ایف پروگرام کے ساتھ ہی جڑا ہوا ہے۔

 

حکومت کی طرف سے پیٹرولیم مصنوعات پر سبسڈی ختم کرنے سمیت دیگر سخت فیصلوں کے باوجود آئی ایم ایف قرض پروگرام کے معاہدے پر راضی نہیں ہوسکا بلکہ پیٹرول پر لیوی اور سیلز ٹیکس بھی بھی عائد کرنے کی ڈیمانڈ کی جارہی ہے۔

 

ماہرین کے مطابق اس سے پروگرام میں شمولیت کا پراسس طول اختیار کررہا ہے اور مالیاتی بحران میں خطرناک حد تک بڑھنے سے غیر یقینی ماحول سے ڈالر کی رفتار بڑی تیزی کے ساتھ جاری ہے۔

 

آئندہ مالی سال میں پاکستان 2 ارب ڈالر سے زائد کا بیرونی قرض لے گا