حکومت کا پیٹرول بم، کسانوں نے بھی حل نکال لیا

حکومت کا پیٹرول بم، کسانوں نے بھی حل نکال لیا

نارووال(نیاٹائم)پیٹرولیم مصنوعات اوربجلی کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے نے کسانوں کو  پچھلی صدی میں دھکیلنے پرمجبورکردیا ہے کیونکہ ٹیوب ویل سے پانی لینے کے لیے جنریٹریا بجلی استعمال کرنا لوگوں کی پہنچ سے دورہوتا جارہا ہے تاہم کسانوں نے بھی اس کا حل نکال لیا ہے۔

 

پیٹرولیم مصنوعات کی دن با دن بڑھتی قیمتوں اوربجلی کی لوڈشیڈنگ کی وجہ سے کسان پریشان ہیں، بارش ہو نہیں رہی اور ڈیزل کی بڑھتی قیمت نے ٹیوب ویل کا پانی پر بھی اخراجات زیادہ ہوگئے ہیں، ایسے میں صوبہ پنجاب کے سٹی شکر گڑھ کا رہائشی کسان اپنے ماضی میں پلٹ گیا ہے جہاں روایتی رہٹ میں بیل جوت کر پانی نکالتے تھے۔

 

 شکرگڑھ میں کسانوں نے روایتی رہٹ میں مہنگے بیلوں کی جگہ سستے گدھے کی سہولت لی ہے جس کے بعدپوتا دادا کے دورمیں چلا گیا۔ رہٹ سے نکلتا ٹھنڈا اورمیٹھا پانی ایک جانب گھریلو ضروریات کوپورا کررہا ہے تو دوسری طرف کھیتی کو سرسبز بنارہا ہے۔صرف اتنا ہی نہیں گاؤں کے بچے گرمی سے بچنے کے لیے اس میں نہا کر خوب مزے لے رہے ہیں۔

 

وفاقی حکومت کا بڑا یوٹرن ، کھاد کی قیمت میں کمی کا نوٹیفکیشن چوتھے روز واپس