شوہرکوقتل کرنےکاطریقہ بتانےوالی مصنفہ بھی شوہرکی قاتل نکلی

شوہرکوقتل کرنےکاطریقہ بتانےوالی مصنفہ بھی شوہرکی قاتل نکلی

امریکا(نیاٹائم ویب ڈیسک)امریکا میں شوہرکوقتل کرنےکے طریقے پرمضمون لکھنےوالی مصنفہ  کو خود شوہر کے قتل میں مجرم قرار دے دیا گیا ہے۔

 

بین الاقوامی میڈیا رپورٹس کے مطابق امریکی ریاست اوریگون کےشہر پورٹ لینڈ کی ایک جیوری نے  کئی برس پہلےشوہر کو قتل کرنے کا طریقہ کے عنوان سے شائع ہونے والے ایک مضمون کی رومانوی ناول نگار نینسی کرمپٹن کو اپنے شوہر کو گولی مار کر قتل کرنے کا مجرم قرار دے دیا۔معلومات کے مطابق، 12 افراد پر مشتمل جیوری نے ڈینیل بروفی کی موت پر دو روز تک غور و خوض کرنے کے بعد بدھ کے دن 71 سالہ مصنفہ نینسی کرمپٹن بروفی کو  درجہ دوم کا قتل کا قصوروار پایا۔

 

میڈیارپورٹس کے مطابق 63 سالہ شیف بروفی کو 2 جون 2018 کو اس وقت قتل کر دیا گیا تھا جب وہ جنوب مغربی پورٹ لینڈ کے اوریگون کُلنری انسٹی ٹیوٹ میں کام پر جارہے تھے۔بین الاقوامی  میڈیا رپورٹس کے مطابق  مصنفہ نینسی کرمپٹن نے کاؤنٹی کورٹ روم میں فیصلے پر کوئی واضح ری ایکشن  ظاہر نہیں کیا البتہ ان کی وکیل لیزا میکس کا بتانا تھا کہ ہم اس فیصلے کے خلاف اپیل دائرکریں گے۔

 

مقدمے کی سماعت کے دوران استغاثہ  نے مؤقف اپنایا کہ نینسی کا اپنے خاوند کو قتل کرنے کا مقصد پیسہ تھا اور وہ 14 لاکھ  امریکی ڈالر کی انشورنس پالیسی پر نقد رقم حاصل کرنا چاہتی تھی۔استغاثہ نے عدالت میں جیوری کو بتایا  خاتون نے کام پر جاتے وقت خاوند کا پیچھا کیا  اسے  9ایم ایم ہینڈگن سے گولی مار دی جب کہ  پولیس کو جائے وقوعہ سے گولی کے دو کور بھی ملے تھے۔

 

لیکن نینسی نے سماعت کے دوران  گواہی دی کہ اس کے پاس اپنےخاوند کو مارنے کی کوئی وجہ نہیں تھی جب کہ  اس کے مالی مسائل ریٹائرمنٹ سیونگ منصوبےکے ایک حصے میں نقد رقم سے حل ہو گئے تھے۔رپورٹس کے مطابق  نینسی ستمبر 2018 میں خاوند کے قتل کے بعد سے ہی حراست میں ہیں مگر اب مجرم قرار دیئے جانے کے بعد انہیں 13 جون کو  عدالت کی طرف سے سزا سنائی جائے گی۔

 

مقبوضہ کشمیر میں انڈین فورسزکےظلم وستم جاری