سپین پلٹ بہنوں کے قاتل قانون کے شکنجے میں آگئے

سپین پلٹ بہنوں کے قاتل قانون کے شکنجے میں آگئے

گجرات(نیا ٹائم) گجرات پولیس نے  بروقت کارروائی کرتے ہوئے 48 گھنٹوں میں سگے بھائی اور چچا کے ہاتھوں قتل ہونیوالی سپین پلٹ دونوں بہنوں کے چھ قاتلوں  کوگرفتار کر لیا۔

 

دوہرے قتل کا افسوسناک واقعہ دو روز قبل  گجرات کے تھانہ گلیانہ کی حددو میں پیش آیا  تھا جہاں پر سپین پلٹ دو بہنوں 24 سالہ انیسہ عباس اور 21 سالہ عروج عباس کو گھر میں گھس کر چچا نے ساتھیوں سمیت  فائرنگ کرکے موت کے گھاٹ اتار دیا تھا اور بعد ازاں موقع سے فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے تھے  جنہیں پولیس نے بروقت کارروائی کرتے ہوئے اڑتالیس  گھنٹوں کے اندر سگے بھائی،چچا اور دونوں بہنوں کے شوہروں سمیت 6 ملزموں  کو گرفتار کرلیا ہے۔اس وقعہ  کا وزیر اعلی پنجاب حمزہ شہباز شریف اور آئی جی پنجاب راو سردار علی نے نوٹس بھی لیا تھا اور آر پی او  گوجرانوالہ سے تفصیلی رپورٹ کے ساتھ ساتھ  ملزموں کی جلد از جلد گرفتاری  کے احکامات بھی دیے تھے۔

 

 دوسری جانب پولیس حکام کا کہنا ہے دونوں بہنیں قتل سے ایک روز قبل ہی سپین سے پاکستان واپس آئی تھیں دونوں بہنیں اپنے شوہروں کو نکاح کے بعد سپین لیجانے پر رضامند نہ تھیں۔انیسہ اور عروج کا ایک سال قبل اپنے چچا زاد اور ماموں زاد سے نکاح ہوا لیکن وہ اس سے خوش نہیں تھیں اور طلاق لینا چاہتی تھیں جس کی بنا پر ان کو سگے بھائی اور چچا نے فائرنگ کرکے موت کے گھاٹ اتاردیا جن کو پولیس نے48 گھنٹوں میں گرفتار بھی  کرلیا ہے۔ ڈی پی او گجرات عطا الرحمن  کا کہنا ہے کہ  ابتدائی تحقیقات میں ملزموں  نے واقعہ کی پلاننگ اور قتل کرنے کا اعتراف بھی  کر لیا ہے جبکہ کیس کو میرٹ پر تفتیش کیساتھ جلد از جلد مکمل کرتے ہوئے بہت جلد منطقی انجام تک پہنچایا جائیگا۔

 

 

کے پی فوڈ سیفٹی اتھارٹی ان ایکشن