میرانشاہ خودکش دھماکے میں تین سکیورٹی اہلکاروں سمیت چھ افراد شہید

میرانشاہ خودکش دھماکے میں تین سکیورٹی اہلکاروں سمیت چھ افراد شہید

راولپنڈی(نیا ٹائم)شمالی وزیرستان کے علاقے میرانشاہ میں خودکش دھماکے میں  تین سکیورٹی اہلکاروں  سمیت چھ افراد شہید ہو گئے۔

 

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کے مطابق شمالی وزیرستان کے علاقے  میران شاہ میں ہونے والے خود کش دھماکے میں سکیورٹی اہلکاروں کیساتھ تین بچے بھی شہید ہو گئے۔ ترجمان پاک فوج  کے مطابق شہید اہلکاروں میں حولدار زبیر قادر، سپاہی عزیر اصفر اور سپاہی قاسم مقصود شامل ہیں۔آئی ایس پی آر  کے مطابق شہید بچوں میں چار سالہ انعم،آٹھ سالہ احسن اور  گیارہ  سالہ احمد حسن شامل  ہیں ۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کا کہنا ہے کہ انٹیلیجنس ایجنسیاں خودکش حملہ آور اور اس کے ہینڈلرز اور سہولتکاروں کے بارے میں جاننے کیلئے انکوائری کر رہی ہیں۔

 

دوسری جانب وزیر اعظم شہباز شریف نے میران شاہ میں ہونے والے خودکش دھماکے کی مذمت کی ہے ۔وزیراعظم نے چھ افراد کی شہادت پر گہرے دکھ اور رنج کا اظہار کیا ہے  جبکہ شہدا کوشاندار الفاظ میں  خراج عقیدت پیش کیا ہے۔شہباز شریف نے کہا کہ معصوم  بچوں کے قاتل اسلا م اور انسانیت کے قاتل ہیں  جبکہ اس سفاک وحشت اور درندگی کے خاتمے تک ہم چین سے نہیں بیٹھیں گے اور قاتلوں کے سرپرستوں کو سزا دے کر رہیں گے۔افواج پاکستان کی عظیم قربانیاں ہماری تاریخ کا سنہری باب ہے اور اپنے شہدا پر پوری قوم کو فخر ہے۔

 

 

اپوزیشن لیڈر کے گھر چھاپہ، ملازم گرفتار