ڈیرہ بگٹی میں ہیضہ بے قابو ہو گیا 5 افراد دم توڑ گئے

ڈیرہ بگٹی میں ہیضہ بے قابو ہو گیا 5 افراد دم توڑ گئے

ڈیرہ بگٹی (نیا ٹائم )بلوچستان کے ضلع ڈیرہ بگٹی کے علاقے پیر کوہ میں ہیضے کی وبا بے قابو ہو گئی ، 3 روز میں ہیضے سے متاثر ہونے والوں کی تعداد 910 تک پہنچ گئی ۔ ہیضے سے متاثرہ 5 افراد دم توڑ گئے ۔

سیکرٹری صحت بلوچستان آغا صالح ناصر کے مطابق ہیضے کی ادویات وافر مقدار میں پیر کوہ پہنچا دی گئی ہیں ، صورتحال کے پیش نظر4 مزید میڈیکل ٹیمیں  علاقے میں بھجوا دی گئی ہیں جبکہ متاثرین کیلئے 10 کیمپ بھی قائم کر دئیے گئے ہیں ۔

آغا صالح نے انکشاف کیا ہے کہ ضلع میں ہیضے کے ساتھ ٹائیفائیڈ اور ہیپا ٹائٹس کے بھی کیسز بڑی تعداد میں موجود ہیں ۔ ضلع میں سول ہسپتال موجود نہیں ، رورل ہیلتح سنٹر ہے جسے اب اپ گریڈ کیا جائے گا ۔

دوسری طرف بی اے پی کے رہنما سینیٹر سرفراز بگٹی نے بلوچستان حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت ہیضے سے متعلق غلط اعداد و شمار پیش کر رہی ہے ۔پیر کوہ میں ہیضے کے باعث انتقال کرنے والوں کی  تعداد 20 سے زائد ہے جن میں بچے بھی شامل ہیں ۔

سرفراز بگٹی نے مزید کہا ہے کہ ہیضے سے متاثرہ 524 مریض آج ایک ہی روز میں داخل ہوئے ہیں ۔ جبکہ  پیر کوہ ڈیرہ بگٹی میں ہیضے سے ایک شخص کا انتقال بھی ہوا ہے ۔ انہوں نے وزیر اعلیٰ بلوچستان اور وزیر اعظم شہباز شریف سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ فوری طور پر پیر کوہ میں ہیضے کی وبا پھیلنے کا نوٹس لیں ۔

انہوں نے کہا کہ پیر کوہ ڈیرہ بگٹی میں اب تک ایمرجنسی کا نفاذ کیوں نہیں کیا گیا ہے ؟ ایمرجنسی نافذ کرنے کیلئے حکومت کو مزید کتنی اموات کا انتظار ہے ؟

 

کولیسٹرول خاموش قاتل، دل کے مریض احتیاط کریں