صدرمملکت کاخط بنام چیف جسٹس

صدرمملکت کاخط بنام چیف جسٹس

اسلام آباد(نیاٹائم) حکومت کی تبدیلی میں مبینہ بیرونی سازش کی تحقیقات کیلئے صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے جوڈیشل کمیشن بنانے کیلئے چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس عمرعطابندیال کو خط لکھ دیا۔

 

صدر مملکت نے اپنے مبینہ بیرونی سازش کی تحقیقات کےمتعلق لکھےگئے خط میں چیف جسٹس سےاستدعاکی کہ جوڈیشل کمیشن کی سربراہی ترجیحاً چیف جسٹس خود کریں،صدرمملکت کاخط میں کہناتھاکہ ملک کو سیاسی و معاشی بحران سے بچانے اورصورتحال مزید بگڑنے سے روکنے کی ضرورت ہے۔

 

صدر مملکت نےچیف جسٹس کو خط میں لکھا کہ ملک میں سنگین سیاسی بحران منڈلا رہا ہے، حالیہ واقعات کے تناظر میں عوام میں بڑی سیاسی تقسیم،تفریق پیدا ہو رہی ہے، تمام اداروں کافرض ہےکہ ملک کو مزید نقصان سے بچانے کےلیے اپناکرداراداکرتے ہوئے بھرپور کوششیں کریں۔

 

صدر نے خط میں مزید لکھا کہ افسوس ذرائع ابلاغ میں تبصرے سیاق و سباق سے ہٹ کر پیش کیے جا رہے ہیں، معاشرے میں غلط فہمیاں بڑھ رہی ہیں، مواقع ضائع ہو رہے ہیں،ملک میں کنفیوژن پھیل رہی ہے، معیشت بھی شدید بحران میں ہے۔

 

صدر مملکت نے خط میں مزید لکھا کہ میمو گیٹ معاملے کی تحقیقات اوردوہزارتیرہ انتخابات میں ہونے والی بے ضابطگیوں کیلئے بھی جوڈیشل کمیشن قائم کیا گیا لہٰذا مبینہ بیرونی سازش سے متعلق معاملے کی تحقیقات کیلئے بھی جوڈیشل کمیشن بنایا جائے۔

 

ڈپٹی اسپیکر کی رولنگ کیخلاف عدالتی فیصلے پر نظرثانی اپیل دائر

 

 

صدرمملکت کاخط بنام چیف جسٹس