اسد عمر ن لیگ میں ہوتے تو شہباز شریف کو کیا مشورہ دیتے؟

اسد عمر ن لیگ میں ہوتے تو شہباز شریف کو کیا مشورہ دیتے؟

اسلام آباد(نیا ٹائم)پاکستان تحریک انصاف کے سیکرٹری جنرل اسد عمر کا کہنا ہے کہ سابق وزیر داخلہ شیخ رشید کے پاس ہم سے زیادہ  معلومات ہوتی ہے جبکہ  فوج کو سیاست میں ملوث نہیں ہونا چاہیے۔

 

نجی ٹی وی کے پروگرام  میں میزبان کیجانب سے پوچھے جانے والے سوالات کے جوابات دیتے ہوئے سابق وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی اور سیکرٹری جنرل پی ٹی آئی اسد عمر کا کہنا تھا  کہ اگر میں پاکستان مسلم لیگ  ن میں ہوتا تووزیراعظم  شہباز شریف کو نئے انتخابات کرانے کا مشورہ دیتا جبکہ میں یہ بھی سمجھتا ہوں کہ  پاکستان مسلم لیگ  ن میں اکثریت وقت سے پہلے  الیکشنز چاہتے ہیں ۔اسد عمر نے  دعویٰ کیا کہ بین الاقوامی مالیاتی ادارے(آئی ایم ایف )نے اپنا مشن بھیجنے سے انکار کردیا ہے جبکہ اس وقت ملکی  معاشی حالت خراب  ہیں  اور اگرحالات ایسے ہی رہے تو ملکی  سیاست کا بیڑہ غرق ہو جائے گا۔

 

پی ٹی آئی سیکرٹری جنرل کا مزید کہنا تھا کہ وزیر دفاع  خواجہ آصف کے اعداد و شمار ٹھیک نہیں ہیں۔مشرق وسطیٰ اور دیگر ممالک میں بڑی تعداد میں پاکستانی موجود ہیں اور مشرق وسطیٰ سے زیادہ پیسہ  یورپ سےآتا ہے۔ہم بیرون ملک پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دلانے کیلئے ہمیشہ سے  کوشاں تھے۔ اسد عمر نے کہا کہ پاک  فوج کو سیاست میں ملوث نہیں ہونا چاہیے جبکہ  مضبوط اور آزاد پاکستان کیلئے مضبوط فوج  کا ہوناضروری ہے۔عوام اور فوج کیساتھ عزت و احترام کا رشتہ ہونا چاہیے جبکہ سابق صدر آصف زرداری نے اینٹ سے اینٹ بجانے کی بات کی تھی۔

 

 

سابق صدر زرداری ن لیگ کے لیے گڑھا کھود رہے ہیں ،شاہ محمود