• Friday, 30 September 2022
لانگ مارچ میں خونریزی ہو سکتی ہے ، شیخ رشید

لانگ مارچ میں خونریزی ہو سکتی ہے ، شیخ رشید

اسلام آباد (نیا ٹائم)سابق وزیر داخلہ شیخ رشید نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کے لانگ مارچ میں خونریزی ہو سکتی ہے ۔

سابق وزیر داخلہ نے ایک انٹرویو میں کہا کہ لانگ مارچ خوفناک ، تشویشناک اور گھمبیر صورتحال اختیار کر سکتا ہے ۔ اس کے نتائج الٹے بھی پڑ سکتے ہیں ۔ اگر حالات خراب ہوئے تو عمران خان کے بس میں بھی کچھ نہیں رہے گا ۔

انہوں نے کہا کہ حکومت پھنس چکی ہے ، 2 ووٹوں کی اکثریت سے امپورٹڈ حکومت کو مسلط کیا گیا ، کوئی بھی جماعت ایم کیو ایم ، بلوچستان عوامی پارٹی ، جی ڈی اے ، سالک حسین یا چیمہ گروپ میں سے کوئی بھی الگ ہو گیا تو یہ حکومت ختم ہو جائے گی ۔انہوں نے کہا کہ یہ غلام حکومت ہے جو لیٹی ہوئی ہے اسے جیسے کہا جائے گایہ ویسا ہی کرے گی ۔

شیخ رشید نے مزید کہا جس بیہودہ طریقے سے عمران خان کو ہٹانے کیلئے سامراجی منصوبہ لایا گیا اس سے عمران خان کو سیاسی طور پر نئی زندگی مل گئی ہے اور اس کی سیاسی پوزیشن بھی بہتر ہو گئی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ لوگوں نے اسے غیرت اور ملکی سلامتی و خود مختاری کا معاملہ بنا دیا ہے ۔ لوگ عمران خان کو غیرت مند رہنما قرار دے رہے ہیں ۔

شیخ رشید نے مزید  کہا نواز شریف نے لندن میں بیٹھ کر کئی بار گالیاں دیں ، شہباز شریف نے کئی بار بوٹ چاٹے اور ضمانتیں دیں ۔ بوٹ پالشیوں کی کوئی حیثیت نہیں ہوتی ۔ قوم انتخابات کی تیاری کرے اس کے علاوہ کوئی حل نہیں ۔ انہوں نے مزید کہا شہباز شریف کو سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کے دوروں سے بھی کچھ حاصل نہیں ہوا انہیں صرف ٹھینگا ملا ہے ۔

 

میری کردار کشی کیلئے "ویڈیوز "تیار کی جا رہی ہیں ، عمران خان