شیخ رشید پرمقدمے کے لیے شہری عدالت جا پہنچا

شیخ رشید پرمقدمے کے لیے شہری عدالت جا پہنچا

اسلام آباد(نیا ٹائم)مسجد نبوی کے تقدس کی پامالی پر سابق وفاقی وزیرداخلہ شیخ رشیداحمد کیخلاف مقدمہ درج کرنے کی درخواست دائر کردی گئی۔

 

شہری حافظ احتشام نےسربراہ عوامی مسلم لیگ کے اور سابق وزیر داخلہ شیخ رشیداحمد  کیخلاف اسلام آباد ڈسٹرکٹ سیشن کورٹ میں مقدمہ درج کرنے کی درخواست دائر کی۔ شیخ رشید کیخلاف اندراج مقدمہ کی دائر درخواست پر سماعت ہوئی۔ سماعت ایڈیشنل سیشن جج طاہر عباس سپرا نے کی۔ درخواستگزار کا کہنا تھا کہ پولیس کیجانب سے مقدمہ درج نہ کرنے پر کورٹ  سے رجوع کیا ہے۔شہری کی جانب سے درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ عوامی لیگ کے سربراہ  نے مسجد نبوی کے تقدس کی پامالی کی منصوبہ بندی کی اور شرپسندوں کو ایسا کرنے پر اکسایا۔ پولیس کو مقدمہ درج کرنے کی درخواست دی مگر کوئی کارروائی  عمل میں نہ لائی  گئی۔

 

درخواستگزار حافظ احتشا م کا مزید کہنا تھا کہ  وزیر اعظم شہباز شریف نے وفاقی کابینہ کیساتھ عمرہ ادائیگی کا اعلان کیا جبکہ سابق وزیر داخلہ  نے نیوزکانفرنس میں کہا  کہ یہ لوگ جہاں بھی جائیں گے عوام انہیں چور ہی  کہیں  گے۔ حرم شریف میں بھی لوگ وزیراعظم شہباز شریف اور ان کی کابینہ کوچور چور کہیں گے۔شہری نے موقف اختیار کیا کہ اٹھائیس  اپریل کو مدینہ میں سیاسی نعرے بازی کا مرکزی کردار شیخ رشیداحمد  ہے کیونکہ  شیخ رشید  نے ہجوم کو اس طرح کی ذلت آمیز حرکت کرنے پر اکسایا اس لیے ا ن کے خلاف مقدمہ درج کیا جائے۔عدالت نے فریقین کو نوٹسز جاری کرتے ہوئے چودہ مئی تک جواب طلب کر لیا۔

 

 

عمران خان نے صدر اور چیف جسٹس پاکستان کو خط ارسال کر دیے