جوہر ٹاون دھماکے کا مرکزی کردار گرفتار

جوہر ٹاون دھماکے کا مرکزی کردار گرفتار

لاہور (نیا ٹائم ) قانون نافذ کرنے والے اداروں کو بڑی کامیابی ملی ہے گزشتہ سال جوہر ٹاون میں کالعدم جماعت الدعوۃ کے سربراہ حافظ سعید کے گھر کے باہر دھماکے کے مرکزی کردار کو قانون نافذ کرنے والے اداروں نے گرفتار کر لیا ہے ، جس کے بارے میں کہا جا رہا ہے کہ وہ اس واقعہ کا ماسٹر مائنڈ تھا ۔ 

انسداد دہشت گردی (سی ٹی ڈی )لاہور کے ڈی آئی جی افضال کوثر نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے بتایا کہ گزشتہ سال لاہور کے علاقے جوہر ٹاون میں ہونے والے بم دھماکے کی تفتیش میں اہم پیشرفت ہوئی ہے ۔ 

سی ٹی ڈی حکام نے دھماکے کے ماسٹر مائنڈ سمیت 2 افراد کو گرفتار کیا ہے جبکہ سی ٹی ڈی نے جامعہ کراچی میں دہشت گردی کے واقعہ کے بعدپنجاب میں بھی فیلڈ یونٹس کو ہائی الرٹ کر دیا ہے ۔ 

ڈی آئی جی سی ٹی ڈی افضال کوثر نے کہا کہ جوہر ٹاون دھماکے کا ماسٹر مائنڈ سمیع الحق اور سہولت کار عزیز اکبر کو گرفتار کیا گیا ہے، جبکہ واقعہ میں غیر ملکی ہاتھ ملوث ہونےکی بھی تصدیق ہوئی تھی ۔ 

ملزم عید گل کو ٹاسکنگ اور لاجسٹک سپورٹ سمیع الحق نے فراہم کی تھی ۔ اس واقعہ میں خاتون سمیت 5 افراد پہلے ہی عدالت سے سزا پا چکے ہیں ۔ 

ڈی آئی جی سی ٹی ڈی کے مطابق جامعہ کراچی میں دہشت گردی کے واقعہ کے بعد پنجاب بھر میں فیلڈ یونٹس کو الرٹ کر دیا گیا ہے ۔تمام ڈسٹرکٹ پولیس آفیسرز کو بھی سکیورٹی بڑھانے کیلئے کہہ دیا گیا ہے ۔

 

بم ڈسپوزل سکواڈ نے جامعہ کراچی دھماکے کی رپورٹ جاری کر دی