شہر قائد سے لاپتہ ہونے والی 14 سالہ بچی تاحال بازیاب نہ ہو سکی

شہر قائد سے لاپتہ ہونے والی 14 سالہ بچی تاحال بازیاب نہ ہو سکی

کراچی (نیا ٹائم )شہر قائد کے علاقے شاہ فیصل کالونی سے لاپتہ ہونے والی 14 سالہ دعا زہرہ کاظمی تاحال بازیاب نہ ہو سکی ، کراچی پولیس نے بچی کی بازیابی کیلئےچھاپہ مار کر ایک بچی کو بازیاب کروا لیا تاہم بازیاب ہونے والی بچی دعا زہرہ نہیں کوئی اور نکلی ہے ۔  

بچی کے والد کو فون کر کے شرارت کر کے تاوان مانگنے بعض افراد کو بھی پولیس نے گرفتار کر لیا ہے ۔ دعا زہرہ کو گھر سے لاپتہ ہوئے 6 روز گزر چکے ہیں ، جس کے بعد سے پولیس واقعہ کی مختلف پہلووں سے تفتیش کر رہی ہے اور جلد کامیابی کا دعویٰ بھِی کیا جا رہا ہے ۔ ذرائع کے مطابق دعا کی گمشدگی کے بعد اس کے اہلخانہ کو مختلف نمبروں سے تاوان کی کالز بھی موصول ہوئیں جس کے بعد پولیس نے پیغامات بھیجنے والوں کو حراست میں لیا تو انکشاف ہوا کہ تاوان کیلئے ہونے والی کالز صرف شرارت کی غرض سے کی گئی تھیں ۔ 

تفتیش کاروں کو واقعہ سے متعلق ایک سی سی ٹی وی فوٹیج ملی ہے جس میں ایک کم عمر لڑکی کو اکیلے سڑک پر چلتے اور پھر ایک پک اپ وین میں سوار ہوتے دیکھا جاتا سہتا ہے ، تاہم دعا کے اہلخانہ کا موقف ہے کہ دعا دن کے وقت گھر سے غائب ہوئی جبکہ سامنے آنے والی سی سی ٹی وی فوٹیج رات کی ہے ۔ 

دوسری طرف تفتیشی حکام نے ضلع سانگھڑ میں کراچی سے پہنچنے والی کم عمر لڑکی کی موجودگی کی اطلاع پر ایک گھر میں چھاپہ مار کاررواءی کرتے ہوئے ایک کم عمر لڑکی کو بازیاب کروا لیا ، تاہم جس بچی کو بازیاب کروایا گیا وہ دعا زہرہ نہیں کوئی اور تھی ۔ 

پولیس ذرائع کا دعویٰ ہے کہ واقعہ کی مختلف پہلووں سے تفتیش کی جا رہی ہے امید ہے پولیس جلد کامیابی حاصل کر لے گی ۔

 
پسند کی شادی کی ضد پر باپ نے بیٹی کو قتل کردیا