آرٹیکل 63 اے کی تشریح کیلئے صدارتی ریفرنس سماعت کیلئے مقرر

آرٹیکل 63 اے کی تشریح کیلئے صدارتی ریفرنس سماعت کیلئے مقرر

اسلام آباد ( نیا ٹائم ) آئین کے آرٹیکل 63 اے کی تشریح کے لیے صدارتی ریفرنس سماعت کیلئے سپریم کورٹ میں مقرر کر دیا گیا ۔ آرٹیکل 63 اے سے متعلق صدارتی ریفرنس کی سماعت 12 اپریل کو دن ایک بجے سپریم کورٹ سماعت کرے گا ۔

سپریم کورٹ کا 5 رکنی لارجر بنچ صدارتی ریفرنس کی سماعت کرے گا۔ جس منحرف اراکین قومی اسمبلی کی نااہلی سے کی مدت سے متعلق سپریم کورٹ سے تشریح کی درخواست بھی کی گئی ہے ۔

ذرائع کے مطابق صدارتی ریفرنس کی کاپی کے مطابق 8 صفحات پر مشتمل ہے جس میں 21 پیراگراف ہیں ۔ صدارتی ریفرنس میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ آرٹیکل 63 اے میں واضح نہیں کہ ڈیفیکٹ کرنے والا رکن اسمبلی کتنے عرصہ کیلئے نااہل ہو گا ۔

وفا داری تبدیل کرنے پر آئین کے آرٹیکل 62 ایف کے تحت نااہلی تاحیات ہونی چاہئے ، ایسے اراکین پر پارلیمنٹ کے دروازے ہمیشہ بند ہوں ۔

صدارتی ریفرنس میں کہا گیا ہے کہ ووٹ خریداری کے کلچر کو روکنے کیلئے آئین کے آرٹیکل 63 اے اور 62 ایف کی تشریح کی جائے گی جبکہ منحرف اراکین کا ووٹ بھی متنازع سمجھا جائے ۔

صدارتی ریفرنس میں کہا گیا ہے کہ نااہلی کا فیصلہ آنے تک منحرف ووٹ گنتی میں شمار نہ کیا جائے ۔

 

تحریک عدم اعتماد پر ووٹنگ پھر تاخیر کا شکار