حزب اختلاف رہنما دہشت گردی کی فہرست میں شامل

حزب اختلاف رہنما دہشت گردی کی فہرست میں شامل

ماسکو ( نیا ٹائم ) روسی حکومت نے حزب اختلاف کے ریر حراست رہنما الیکسی نوالنی اور ان کے قریبی ساتھیوں کو دہشت گردی کی فہرست میں شامل کر دیا ۔

عالمی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق روسی حکام کے فیصلے کے بعد بینک اس قانون کی پابندی کرتے ہوئے فہرست میں شامل افراد کے اثاثے منجمد کر دیں گے ۔ الیکسی نوالنی روسی صدر ولادیمیر پیوٹن کے سخت ترین ناقدین میں شامل ہیں اور 2014 ء میں دھوکہ دہی کی معطل سزا کی خلاف ورزی پر  چھ ماہ کی قید بھگت رہے ہیں ۔ تاہم اب ان کا نام دہشت گردوں کی فہرست میں بھی شامل کر دیا گیا ہے ۔

واضح رہے نوالنی کو اس وقت گرفتار کیا گیا تھا جب وہ زہر خورانی کے بعد جرمنی سے پانچ ماہ تک علاج کے بعد روس واپس پہنچے تھے ۔ ایک سال قبل نوالنی کی گرفتاری کے خلاف ملک بھر میں بڑے عوامی مظاہرے بھی ہوئے تھے ۔ جو حالیہ دور کے سب سے بڑے مظاہرے قرار دئیے گئے تھے ۔

روسی سیاستدان نے زہر دینے کا الزام روسی حکومت پر لگاتے ہوئے کہا تھا کہ انہیں روسی حکومت کی ایماء پر زہر دیا گیا تھا تاہم حکام نے ان الزامات کی سختی سے تردید کی تھی ۔

 

امریکہ میں کشتی الٹنے سے 39 افراد ہلاک