23 مارچ اپوزیشن کی سیاسی شکست کا دن ہو گا

23 مارچ اپوزیشن کی سیاسی شکست کا دن ہو گا

اسلام آباد(نیا ٹائم) وفاقی وزیرداخلہ شیخ رشید کا کہنا ہے کہ 23 مارچ کو اگر اپوزیشن کو ذاتی سیاست کیلئے احتجاج کرنا ہے تو وہ اپنا شوق پورا کرلےانھیں اس روز سیاسی طور پر شکست ہوگی۔

 

راولپنڈی میں وفاقی وزیرداخلہ شیخ رشید احمد کا تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہنا  تھا کہ تئیس مارچ کا دن نہایت حساس ہوتا ہے اور اس دن اہم سڑکیں بند ہوں گی،اسلامی دنیا کے کئی بڑے نام اس دن اسلام آباد میں موجود ہوں گے۔اس لئے اپوزیشن جماعتوں سے  درخواست کی تھی کہ وہ اپنے احتجاج کی تاریخ  کو تھوڑا آگے لے جائیں۔وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ  اگر اپوزیشن کو اپنی ذاتی سیاست کیلئے اہم رہنماؤں کو ناراض کرنا ہے تو تئیس  مارچ کو یہ احتجاج کرلے مگرانہیں سیاسی  طور پرشکست ہوگی اوروہ  ذلیل ورسوا ہوجائیں گے۔

 

شیخ رشید احمد نے واضح کیا کہ اپوزیشن کے احتجاج کیلئے اس وقت تک کوئی مسئلہ پیدا نہیں کریں گے جب تک وہ قانون کیلئے مسئلہ پیدا نہیں کریں گے۔انہوں نے کہا کہ اپوزیشن ساڑھے تین سالوں میں بھی حکومت کوایک بھی بل پرشکست نہیں دے سکی اور یہ کہہ رہے تھے کہ ہم استعفیٰ دیں گے مگر یہ وہاں سے بھی بھاگ گئے۔وفاقی وزیر داخلہ کاکہنا تھا کہ اپوزیشن جمہوری طریقے سے اسمبلیوں میں آکر طاقت کا مظاہرہ کرے ورنہ ڈیڑھ سال  مزید ذلیل و خوار ہوگی۔

 

وفاقی وزیر داخلہ کا شیخ رشید احمد کا سربراہ پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) مولانا فضل الرحمان کے حوالے سے کہنا  تھاکہ انھوں نےغیرذمہ دارانہ بات کی کہ ہم وزیر کو مکھی کی طرح نکال دیں گے جبکہ فضل الرحمان کو صرف اور صرف میڈیا نے زندہ رکھا ہوا ہےورنہ ان کی اتنی اہمیت نہیں کہ ملکی سیاست پر اثر انداز ہو سکیں۔شیخ رشید نے کہا کہ یہ بات تو طے ہے کہ عمران خان کی حکومت اپنے پانچ سال پورے کریں گے جبکہ اگلے پانچ سال بھی عمران خان ہی حکومت کر ے گا۔اپوزیشن جماعتوں کا ٹولہ بیروزگاروں کا ٹولہ ہے  جو صرف اورصرف اپنی نوکریاں پکی کروانا چاہتی ہیں۔

 

 

 

پچھلا وزیر اعلی صرف ٹوپیاں اور ہیٹ پہن کر ہی گھومتا تھا