دکانوں کو پی او ایس  سے جوڑنے پر ایف بی آر کو مزاحمت کا سامنا

دکانوں کو پی او ایس سے جوڑنے پر ایف بی آر کو مزاحمت کا سامنا

کراچی(نیا ٹائم ویب ڈیسک): ریجنل ٹیکس آفس ون کی ٹیموں کو شناخت شدہ دکانوں کو پوائنٹ آف سیل سسٹم سے منسلک کرنے کی مہم میں تاجروں کی مزاحمت کا سامنا کرنا پڑا۔

 

پوائنٹ آف سیل سسٹم سے منسلک کرنے کے لیے ایف بی آر کی مہم کے ایک حصے کے طور پر، ریجنل ٹیکس آفس ون کی ٹیموں کو پیر کو تاجروں کی جانب سے نشاندہی کی گئی دکانوں کو پوائنٹ آف سیل سسٹم سے منسلک کرنے کی مہم میں مزاحمت کا سامنا کرنا پڑا۔  احتجاج کے باوجود آر ٹی او ون کی ٹیموں نے اپنی کارروائی جاری رکھی۔

 

حکام کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ آر ٹی او ون کی ٹیموں کی جانب سے پوائنٹ آف سیلز کے دائرہ کار میں آنے والی دو عدد دکانوں کو عدم تعاون پر سیل کردیا گیا ہے جس میں 1 دکان منظور کالونی فرنیچر مارکیٹ اور  دوسری گل پلازہ میں ہے۔ تاہم گل پلازہ میں ایک دکاندار کی جانب سے بھی تعاون کرتے ہوئے اپنی دکان کو پوائنٹ آف سیلز سسٹم سے منسلک کر لیا گیا ہے۔

 

حکام نے بتایا کہ آرٹی او ون نے گل پلازہ کی ایسی دکانوں کی نشاندہی کی تھی جو پوائنٹ آف سیلز سسٹم سے منسلک ہونے کے دائرہ کار میں آتی ہیں لیکن پی او ایس مہم کی ٹیم کے پہنچتے ہی غیر متعلقہ دکانداروں کی جانب سے اس بار کی مزاحمت کی گئی جس پر آر ٹی او حکام کو پولیس کی مدد حاصل کرنا پڑی کیونکہ دیگر تاجروں نے گل پلازہ کی بجلی بند کرنے کے ساتھ ہنگامہ آرائی کرنا بھی شروع کردی تھی۔

 

حکام نے بتایا کہ ایف بی آر کی ہدایات اور چیف کمشنر آر ٹی او ون کے احکامات پی او ایس ٹیم کی جانب سے پیر کو قانونی کارروائی کرتے ہوئے گل پلازہ کی 3 دکانوں میں سے ایک  کو پی او ایس سسٹم سے منسلک کردیا  جبکہ دوسری کو عدم تعاون پر سیل کردیا گیا ہے۔

 

حکام کے مطابق  تیسری دکان کو بھی سسٹم سے ہی منسلک کر دیاجائے گا۔ایف بی آر ٹیم کی روانگی کے بعد گل پلازہ کے دیگر تاجروں نے بطور احتجاج ایم اے جناح روڈ  کو مکمل طور پر بند کر دیا تاہم کچھ ہی دیر بعد احتجاج ختم بھی کردیا گیا اور سڑک کو کھول دیا گیا۔

 

مانیٹری پالیسی میٹنگ ، شرح سود برقرار رکھنے کا فیصلہ