بالی وڈاداکارمتھن چکرورتی مودی پربرس پڑے

بالی وڈاداکارمتھن چکرورتی مودی پربرس پڑے

ممبئی(نیا ٹائم ویب ڈیسک): بھارتی اداکار متھن چکرورتی نے انکشاف کیا ہے کہ حکومت کی عالمی مرض کورونا وبا کے دوران اقدامات نہ کرنے پر اُن کا کاروبار بالکل ٹھپ ہوگیا تھا۔

 

حال ہی میں بالی ووڈ کے سینئر اداکار متھن چکرورتی نے ایک ٹی وی شو میں شمولیت اختیار کی اور کورونا وبا کے دوران پیش آنے والی مشکلات کے حوالے سے کھل کر بات کی۔اپنی گفتگو کے دوران انہوں نے بتایا کہ کورونا کے باعث ان کے ریسٹورنٹ کا کاروبار بری طرح متاثر ہوا، ایک وقت ایسا بھی تھا کہ کافی کا ایک کپ بھی فروخت نہیں ہوتا تھا، کاروبار بالکل ختم ہونے کی وجہ سے پیسے آنا بند ہوگئے تھے، جس کے باعث شدید معاشی مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔

 

‎متھن نے کاروبار تباہ ہونے کی واضح وجہ کورونا کے دوران حکومت کے سیاحت کے لیے کسی قسم کے کوئی اقدامات نہ ہونے کو قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اگر مودی حکومت  ٹوررازم کے لیے اقدامات کرتی تو اس قدر نقصان کا سامنا نہیں کرنا پڑتا۔

 

‎ان کا مزیدکہنا تھا کہ پوری دنیا میں کورونا بحران ابھی تک برقرار ہے جبکہ بھارتی شہریوں کو کورونا کی تیسری لہر کا سامنا ہے، ہر شعبہ پر اس کا گہرا اثر پڑا ہے،  پچھلے دو سالوں کے دوران وبا سے کئی افراد کی اموات بھی ہو چکی ہیں۔

 

‎متھن چکرورتی نے کہا کہ کورونا کے باعث مختلف پیشوں سے منسلک ملازمین کو نوکریوں سے محرومی کا بھی سامنا کرنا پڑا ہے، معاشی معاملات اس قدر بری طرح متاثر ہوئے کہ کئی لوگ امیر سے غربت کی لکیر کے نیچے دھنس گئے ، یومیہ اجرت کما کر گھر چلانے والوں کا سوچ کر روح ہی کانپ جاتی ہے۔

 

پریانکا زیادہ بچوں کی خواہشمند ہیں،کزن کا انکشاف