شارٹ ٹرم اغواکی وارداتوں میں سکیورٹی گارڈ گرفتار

شارٹ ٹرم اغواکی وارداتوں میں سکیورٹی گارڈ گرفتار

کراچی (نیا ٹائم)اینٹی وائلنٹ کرائم سیل (اے وی سی سی) نے کراچی میں شارٹ ٹرم اغوا کاروں کا گروہ چلانے کے الزام میں ایک سکیورٹی گارڈ کو گرفتار کرلیا ہے۔

 

ملزم کی شناخت مرزا غیور کے نام سے ہوئی ہےاوروہ کراچی کے علاقے محمود آباد کا رہائشی ہے غیور پچھلے سال 2021ء میں گلشن اقبال اور مبینہ ٹاؤن تھانوں میں قلیل مدتی اغوا کے  تین مقدمات میں کراچی پولیس کو مطلوب تھا۔کیس کے انویسٹی گیشن آفیسر سعید تھہیم نے نجی ٹی وی چینل سےگفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ غیور سکیورٹی گارڈ ہے اور وہ ایک نجی سکیورٹی فرم سے وابستہ ہے اور خود کو کسٹم افسر ظاہر کرتا تھا۔

 

تفتیشی افسرکا مزید کہنا تھاکہ گینگ چھ ارکان پر مشتمل ہےجس میں کراچی پولیس کے دوکانسٹیبل بھی شامل ہیں۔سعید تھہیم نے بتایا کہ کانسٹیبل عثمان اور شہنشاہ زمان ٹاؤن تھانے میں تعینات تھے۔ اس گروپ کے دیگر  تین ارکان مزمل، ایاز اور علی بہادر سمیت تمام افراد کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔آئی او(انویسٹی گیشن آفیسر) نے بتایا کہ مزمل کو گاڑیوں کا بندوبست کرنے کا کام سونپا جاتا تھا جبکہ مزمل گاڑیاں کرائے پر لیتا تھا۔

 

تفتیشی افسر کا مزید کہنا تھا کہ غیور کانسٹیبل عثمان اور شہنشاہ کیساتھ مل کر جعلی چھاپے مارتے اور اپنے ہدف کو تحویل میں لے لیتے اور خود کو پاکستان کسٹمز کے اہلکار ظاہر کرتے تھے۔ سعید تھہیم کا مزید کہنا  تھاکہ ملزم اغواء کئے گئے لوگوں کو اپنے ساتھ لے جاتے۔ شہر کی مختلف سڑکوں پر اپنی گاڑیاں چلاتے اور لوگوں کے رشتہ داروں کو پیسوں کےلئے بلاتے۔

 

آئی اوکا مزید کہنا تھا کہ ایک بار جب انہیں پیسے ملتے تو وہ مغوی کو چھوڑ دیتے تھے اوربعد میں  رقم گروپ کے ارکان میں تقسیم کی جاتی  تھی ۔سعید تھہیم نے بتایا کہ کانسٹیبل عثمان اور شہنشاہ کو بھی گرفتار کیا جاچکا ہےاور دونوں کو جیل  بھی بھجوادیا گیا ہے جبکہ  انہیں پولیس نوکری سے بھی فارغ کردیا گیا ہے۔تفتیشی افسر نے مزید کہا کہ  ملزموں سے اغواکی وارداتوں میں استعمال ہونےوالی  گاڑیاں بھی برآمد کرلی گئیں ہیں۔

 

 

اغوا کی وارداتوں میں ملوث جعلی کسٹم انسپکٹر پکڑا گیا