احسن اقبال اورحماد اظہر کی قومی اسمبلی میں لفظی جھڑپ

احسن اقبال اورحماد اظہر کی قومی اسمبلی میں لفظی جھڑپ

اسلام آباد(نیاٹائم)قومی اسمبلی اجلاس کے دوران مسلم لیگ ن کے رہنما احسن اقبال اوروفاقی وزیرتوانائی حماداظہر کے درمیان لفظی جھڑپ ہوگئی، لیگی رہنماء نے مناظرے کا چیلنج کیا تووفاقی وزیرنے ایوان میں ہی حساب برابرکردیا۔

 

تفصیلات کے مطابق آج قومی اسمبلی کے اجلاس میں احسن اقبال اورحماد اظہر نے ایک دوسرے پر لفظی تیر برسائیں جہاں پہلے مسلم لیگ ن کے رہنما نے وفاقی وزیر توانائی کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ہر ناکام وزیر کا لیکچرسننے سے گریز کیا جائے۔ جو گیس نہیں دے سکا وہ اب معاشیات پربول رہا ہے، موجودہ حکومت نے معیشت کو تباہ کردیا ہے، اس حوالے سے ٹی وی پربحث کرلیں۔

 

اس موقع پرسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے حماد اظہر کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ آپ کو ٹی وی پر چیلنج کیا گیا ہے، کیا آپ اس کا جواب دیں گے؟ سپیکر کے ایک سوال کے جواب میں وفاقی وزیر نے کہا کہ میں اس ایوان میں ان کے چیلنج کا جواب ٹی وی پر دوں گا، ان کا معیشت سے کوئی تعلق نہیں، اسی لیے ہمارا ساتویں جماعت کےمطالعہ پاکستان پرسبق دے رہے تھے۔

 

اس سے قبل قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران وفاقی وزیر توانائی حماد اظہر نے ایم کیو ایم اراکین کی جانب سے کراچی میں گیس کی قلت پر توجہ مبذول کرانے کے نوٹس پر بات کرتے ہوئے کہا کہ مقامی گیس کے ذخائر تیزی سے ختم ہورہے ہیں۔جس کی وجہ سے سندھ میں گیس کم ہورہی ہے۔

 

انہوں نے کہا کہ سندھ چند سالوں میں گیس درآمد کرنے والا صوبہ بن جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ انڈسٹری سے موسم سرما میں 100 ایم ایم سی ایف ڈی گیس کراچی کو فراہم کی جاتی تھی۔ اس لیے سندھ ہائی کورٹ سے استدعا ہے کہ حکم امتناعی واپس لیا جائے۔

 

عمران خان کی پی ایس ایل 7 میں کس ٹیم کیلئے نیک خواہشات