پارلیمانی کمیٹی نے جسٹس عائشہ ملک  کےنام کی منظوری دےدی

پارلیمانی کمیٹی نے جسٹس عائشہ ملک کےنام کی منظوری دےدی

اسلام آباد(نیاٹائم) ججز تقرری سے متعلق پارلیمانی کمیٹی نے جسٹس عائشہ ملک کو سپریم کورٹ کا جج مقرر کرنے کی منظوری دے دی ہے۔

 

ججز تقرری سے متعلق پارلیمانی کمیٹی کا اجلاس پیپلزپارٹی کےرہنما فاروق ایچ نائیک کی صدارت  میں ہوا جس میں کمیٹی نے جسٹس عائشہ  کو سپریم کورٹ کا جج مقررکرنے کی منظوری جاری کردی۔

 

فاروق ایچ نائیک کا کہنا تھا کہ جسٹس عائشہ ملک کے نام کی منظوری اتفاق رائے کے بعد دی گئی ہے، ہم سنیارٹی کے طریقہ کار کا خاتمہ نہیں کررہے، ایک خاتون کی پہلی مرتبہ تقرری ہورہی ہے تو اسکی منظوری دی  گئی ہے اور جسٹس عائشہ  کے نام کی منظوری ملک کے فائدے میں دی گئی ہے۔

 

واضح رہے کہ جوڈیشل کمیشن نےجسٹس عائشہ ملک کو سپریم کورٹ میں جج مقرر کرنے کی سفارش کی تھی۔خیال رہے کہ پچھلے برس ستمبر میں بھی لاہور ہائیکورٹ کی جسٹس عائشہ  کی سپریم کورٹ میں تقرری کا معاملہ چار چار سے ٹائی ہوا تھا، اُس وقت بھی عائشہ ملک کی سپریم کورٹ میں تقرری کے معاملے پر وکلا کی طرف سے احتجاج ریکارڈ کرایا گیا تھا جس میں انہوں نے مؤقف اختیار کیا تھا کہ ایک نہیں تین تین خاتون ججز لائیں لیکن سنیارٹی کی بنیاد پرلایاجائے۔

 

15مئی کوپنجاب میں بلدیاتی الیکشن کرانے کا اعلان