بلدیاتی انتخابات میں لوگوں کے ضمیر خریدنے کی کوششیں جاری

بلدیاتی انتخابات میں لوگوں کے ضمیر خریدنے کی کوششیں جاری

اسلام آباد(نیا ٹائم)امیر جمعیت علما اسلام ف  مولانا فضل الرحمان کا کہنا ہے کہ بلدیاتی انتخابات میں حکمران جماعت کا امیدوار لامحدود سرکاری وسائل استعمال کر کے لوگوں کے ضمیر خریدنے اور سرکاری افسروں کے وقار کو بیچنے میں مصروف ہے۔ 

 

ڈیرہ اسماعیل خان میں لوکل باڈیز الیکشن کے حوالے سے اپنے تحفظات کا اظہار کرتے ہوئےامیر جمیعت علمائے اسلام ف اور پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ(پی ڈی ایم )کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ ڈی آئی خان میں وفاقی اور صوبائی وزراء کی ایما پر ڈپٹی کمشنر نے ایک  ارب اٹھاسی کروڑ کی سکیموں کی منظوری دے کر پورے انتخابی عمل کو متنازعہ بنا دیا گیا ہے۔مولانا فضل الرحمان کا مزید کہنا تھا کہ حکمران  جماعت کا امیدوار لامحدود سرکاری وسائل استعمال کرکے لوگوں کے ضمیر خریدنے اور سرکاری افسروں کے عزت  وقار کو بیچنے میں مصروف ہے۔

 

سربراہ پی ڈی ایم مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ ٹی ایم اے کے علاوہ تمام انتظامی محکموں کے افسر اور اہلکار پارٹی کارکنوں کی طرح موجودہ وفاقی حکومت کے امیدوار کی انتخابی مہم  چلا کے اپنے عہدے کی توہین اور انتخابی ضابطہ اخلاق کی پامالی میں مصروف ہیں۔انتظامیہ کے اعلی افسرجس بے حجابی کیساتھ انتخابی عمل کو متنازعہ بنانے پر ڈٹ گئے ہیں اس سے عوام میں اشتعال بڑھ رہا ہےاور اگر اس معاملے میں کوئی کارروائی نہ کی گئی تو عوامی غم و غصے کو کوئی بھی نہیں روک پائے گا۔

 

امیر جمعیت علما اسلام ف کا مزید کہنا تھا کہ اگرالیکشن کمیشن آف پاکستان  کی جانب سے ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی اور لاقانونیت کا بروقت نوٹس نہ لیا گیا  تو ہماری جماعت اس معاملےکو عوامی عدالت میں لے جائے گی۔خیال رہے کہ خیبرپختونخوا میں لوکل باڈیز انتخابات کے پہلے مرحلے میں الیکشن سے ایک دن پہلے ڈی آئی خان سےعوامی نیشنل پارٹی ( اے این پی) کے سٹی مئیر کے امیدوار کو گولیاں مارکے قتل کردیا گیا تھاجس کے  بعدضلعی الیکشن کمیشن نے ڈیرہ اسماعیل خان  میں صرف سٹی میئر کی نشست پر الیکشن ملتوی کرنے کا اعلان کیا تھا۔

 

 

 

نیب نے مریم نواز کے خلاف اپیل دائر کر دی