فضائی آپریشن کیلئے کونسی ٹیکنالوجی نقصان دہ

فضائی آپریشن کیلئے کونسی ٹیکنالوجی نقصان دہ

واشنگٹن (نیا ٹائم ویب ڈیسک) امریکی ایئر لائنز کمپنیوں نے فائیوجی ٹیکنالوجی کو فضائی آپریشن کےلیےنقصان دہ قرار دے دیا۔

 

غیرملکی خبررساں ادارے کےمطابق ایئرلائنز کے سربراہان نے ایک خط میں مطالبہ کیا ہےکہ فیڈرل ایوی ایشن ایڈمنسٹریشن کی ہدایت کے مطابق فائیو جی ٹیکنالوجی کو ایئرپورٹ کے رن ویز سے 2 میل دور تک محدود رکھا جائے۔خط کے متن کے میں بتاتا گیا تھاکہ دیگرمسافر اور کارگو طیاروں کو آپریشنل مسائل کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے۔

 

امریکی ایئرلائنز نےخبردارکیاہےکہ فائیو جی فریکوئنسی پرواز کی اونچائی کی پیمائش اور حفاظتی آلات کو متاثرکرسکتی ہے اس لیے انہیں ہوائی اڈوں سے دور رکھا جانا چاہیے۔خیال رہے کہ اس سے پہلےفائیو جی ٹیکنالوجی کےجہازوں کےلیےخطرہ بننے کے حوالے سےکپتانوں کی عالمی تنظیم ایفالپا کی جانب سے بھی خبردارکیا گیا ہے۔

 

واضح رہےکہ گزشتہ برس فروری میں پاکستان میں فائیوجی ٹیکنالوجی کا تجربہ کیا گیا تھا۔ وفاقی وزیر برائےانفارمیشن ٹیکنالوجی امین الحق نے واضح کیا کہ پاکستان نےفائیوجی ٹیکنالوجی کی آزمائش کےدوران 1.685گیگا بائٹس فی سیکنڈ ڈاؤن لوڈ کی رفتار کیساتھ اپنےتیزترین انٹرنیٹ ڈیٹا کی شرح حاصل کرنےکا کامیاب تجربہ کرلیا ہے۔ کامیاب تجربہ ملک کے سب سے بڑے ٹیلی کام گروپ پی ٹی سی ایل کی جانب سے پی ٹی سی ایل ہیڈکوارٹر میں منعقدہ تقریب میں کیا گیا تھا۔اس تجربے پر وفاقی وزیر برائےانفارمیشن ٹیکنالوجی فائیو جی ٹیکنالوجی معاشی خوشحالی کے خواہشمند ملک کوابھرتے ہوئے ٹیکنالوجی ماحول کا اہل بنائے گی۔

 

سری لنکن منیجرکی بیوہ کو کتنی رقم منتقل