16 سالہ ذہنی معذور لڑکی کےساتھ اجتماعی زیادتی

16 سالہ ذہنی معذور لڑکی کےساتھ اجتماعی زیادتی

راجستھان (نیا ٹائم ویب ڈیسک ) بھارت میں ایک 16 سالہ ذہنی معذور لڑکی کواجتماعی زیادتی کا نشانہ بنادیا گیا۔بھارتی میڈیاکےمطابق لڑکی کےساتھ اجتماعی زیادتی کاواقعہ راجستھان کے ضلع الور میں پیش آیا جہاں ملزمان نے پہلے 16 سالہ لڑکی کو زیادتی کا نشانہ بنایااورپھر تیز دھار آلےکواس کے جسم کے نازک حصوں میں ڈال کر اسے پل پر پھینک کر بھاگ گئے۔

 

ذرائع کے مطابق متاثرہ لڑکی ذہنی معذور ہے جو پل کے قریب سے تشویشناک حالت میں پائی گئی جسے فوری طبی امداد کےلیے ہسپتال منتقل کردیا گیا۔

 

ڈاکٹرز کے مطابق متاثرہ لڑکی کے جسم کے حساس حصوں میں لوہے کی چیزیں داخل کرنے سے اس کے اندرونی اعضاء کو شدید نقصان پہنچا ہے ۔ڈاکٹروں نے مزید بتایا ہےکہ خون نہ رکنے کے باعث لڑکی کا فوری طور پر آپریشن کیا گیا جس کے بعد اس کی حالت خطرے سے باہر ہے۔ متعلقہ پولیس نے کہا ہے کہ واقعے کی تحقیقات شروع کر دی گئی ہیں اور کیمروں کا استعمال کرتے ہوئے ملزمان کی گرفتاری کی کوششیں کی جا رہی ہیں۔

 

واضح رہے کہ بھارت تہلکہ مچانے والے نربھیا زیادتی کیس کے ملزمان کو 7 سال بعد پھانسی دے دی گئی تھی۔ ملزمان وینے شرما، اکشے ٹھاکر، مکیش سنگھ اور پون گپتا کو ٹرائل کورٹ نے 2013 میں پھانسی کی سزا سنائی تھی جہاں بلآخر طویل مدت کے بعد 20مارچ 2020 کو صبح ساڑھے پانچ بجےنئی دہلی میں پھانسی دی گئی تھی۔

 

پارلیمنٹ کےباہراپوزیشن جماعتوں کااحتجاج