• Thursday, 27 January 2022
پاکستان اور ترکی انسانی سمگلنگ کی روک تھام پر متفق

پاکستان اور ترکی انسانی سمگلنگ کی روک تھام پر متفق

اسلام آباد ( نیا ٹائم ) پاکستان اور ترکی کے وزرائے داخلہ نے علاقائی امن و امان ، غیر قانونی امیگریشن ،انسانی سمگلنگ روکنے پر اتفاق کیا ہے ۔  دونوں رہنماؤں نے ویڈیو کانفرنس کے دوران باہمی دلچسپی کے دیگر امور پر بھی بات چیت کی۔

وزیر داخلہ شیخ رشید اور ترک ہم منصب سلیمان سوئیلو نے ویڈیو کانفرنس کے دوران میں دونوں ممالک کے وزراءے خارجہ نے باہمی تعلقات کو فروغ دینے کے عزم کا اظہار کیا ۔

پاک ترک وزرائے داخلہ نے غیر قانونی امیگریشن اور انسانی سمگلنگ کی روم تھام کے لیے مشترکہ اقدامات اٹھانے پر اتفاق کیا ۔ دونوں وزرائے داخلہ نے ایک دوسرے کو دورے کی دعوت بھی دی ۔

وزیر داخلہ شیخ رشید نے مزید کہا کہ پاکستان اور ترکی کے درمیان تعلقات دیرینہ اور برادرانہ ہیں ۔ مسلم اُمہ کو درپیش مسائل پر دونوں ممالک کا  موقف ایک ہے ۔

شیخ رشید نے مزید کہا کہ پاکستان نے افغان عوام کو قحط سے بچانے کیلئے امداد کی اپیل کی تھی ۔ افغانستان کے حوالے سے او آئی سی وزرائے خارجہ کی غیر معمولی کانفرنس کا انعقاد بھی پاکستانی سفارتکاری کی بڑی کامیابی ہے ۔ ترکی کی جانب سے افغان بھائیوں کی امداد قابل تحسین اقدام ہے ۔

ترک وزیر داخلہ سلیمان سوئیلو نے کہا کہ پاکستان اسلامی برادر ملک ہے ۔ ، باہمی تعلقات قابل فخر ہیں ، پاکستان اور ترکی کے درمیان روابط بڑھانے کی بھی اشد ضرورت ہے ۔

انہوں نے کہا کہا کہ دنیا کو دہشت گردی ، منشیات سمگلنگ ، سائبر سکیورٹی کرائمز اور انسانی سمگلنگ جیسے چیلنجز کا سامنا ہے جن سے نمٹنے کے لیے مشترکہ حکمت عملی اپنانے اور پیش بندی کی ضرورت پر زور دیا ۔

 

سابق چیف جسٹس ثاقب نثار کی پھر طلبی