ہالی ووڈ کی پیشکش کو قبول نہیں کیا ، سجل علی

ہالی ووڈ کی پیشکش کو قبول نہیں کیا ، سجل علی

کراچی(نیا ٹائم )اداکارہ سجل علی  کی جانب  انکشاف کیا گیا ہے کہ انہیں ہالی ووڈ سے فلم میں مرکزی کردار کی پیشکش ہوئی تھی۔

 

 میڈیارپورٹس کے مطابق حال ہی میں ایک انٹرویو میں سجل علی نے کہا کہ ان سے ہالی ووڈ کے ایک بڑے پراجیکٹ کیلئے رابطہ کیا گیا تھا۔ فلم کی کہانی بہت دلچسپ تھی لیکن اس میں ایک بولڈ سین تھا جسے کرنا غیر مناسب تھا۔اداکارہ نے  مزید کہا  کہ اگر میں کسی طرح وہ  بولڈ سین عکسبند کروا لیتی تو میرے  ملک کے لوگ اورمداح ہمیشہ مجھے اس سین سے منسلک کرتے اور میں یوں انہیں مایوس نہیں کرنا چاہتی ہوں۔

 

اداکارہ  نے اپنے انٹرویو میں  بالی ووڈ کی  فلم موم میں اداکاری  کرنے کے بعد انڈسٹری میں لوگوں کے بدلتے رویوں  سے متعلق بھی بات کی ۔انہوں نے کہا کہ لوگوں میں یہ قیاس آرائیاں کی جا رہی تھیں کہ سجل کو آنجہانی اداکارہ سری دیوی کے ساتھ کردار کے لیے کیسے منتخب کیا جا سکتا ہے۔ اداکارہ کا کہنا تھا کہ اس قسم کی گفتگو نے مجھے افسردہ کردیا کیونکہ میں اس سے قبل اپنی انڈسٹری کی قابل اور ورسٹائل اداکاراؤں ثانیہ سعید اور نادیہ جمیل کے ساتھ کام کر چکی ہوں میرے لیے وہ سری دیوی کی طرح ہی باصلاحیت اداکارہ ہیں۔

 

اداکارہ کا کہنا تھا کہ میرا پاکستان میں کیےجانے والےکام  کی بنا پر ہی  بھارت میں منتخب کیا گیا تھا جب کہ پاکستانی انڈسٹری میں مجھے بالی وڈ میں کام کی وجہ سے عزت دی  گئی  پتہ نہیں کہ  ہم اپنے ٹیلنٹ کو میرٹ کے تحت کب اہمیت دینا شروع کریں گے۔ خیال رہے کہ سجل علی نے 2017 میں ریلیز ہونے والی بالی ووڈ فلم 'موم' میں کام کیا تھا جس میں وہ سری دیوی کی بیٹی تھیں۔ اس فلم میں سجل کے علاوہ پاکستانی اداکار عدنان صدیقی بھی موجود تھے۔

 

ہمایوں سعید نیٹ فلکس سیریز میں کردار نبھائیں گے