بلدیاتی انتخابات میں پی ٹی آئی بمقابلہ پی ٹی آئی تھا،شبلی فراز

بلدیاتی انتخابات میں پی ٹی آئی بمقابلہ پی ٹی آئی تھا،شبلی فراز

 

اسلام آباد(نیا ٹائم) وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی شبلی فراز کا خیبرپختونخواہ کے   بلدیاتی انتخابات میں اپنی پارٹی  شکست کو قبول کرتے ہوئے کہنا تھا کہ بلدیاتی انتخابات میں پی ٹی آئی  بمقابلہ پی ٹی آئی تھا اس لئے ہم الیکشن ہار گئے۔

 

 نجی ٹی وی چینل میں سامنے آنے والی خبروں کے مطابق وفاقی وزیر شبلی فراز نے کے پی  کے بلدیاتی انتخابات میں اپنی پارٹی کی شکست کو تسلیم کرتے ہوئے  کہنا تھا کہ بلدیاتی  الیکشن میں پی ٹی آئی بمقابلہ پی ٹی آئی  تھا۔ ہمارے بہت سے کارکن پارٹی قیادت سے ناراض تھے اس لئے ہم انتخابات ہار گئے جبکہ ملک میں حالیہ مہنگائی کا ہونا بھی شکست کی ایک وجہ بنا۔

 

وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی  کا کہنا تھا کہ تمام تر صورت حال کے باوجود بھی ہم سیٹیں  جیت رہے ہیں  اور ابھی بہت سے پولنگ سٹیشنز کے نتائج آنا ابھی باقی  ہیں ۔الیکشن میں ہماری ہار کی ایک وجہ مہنگائی بھی ہے مگر  یہ  اس وقت پوری دنیا کا مسئلہ ہےمگر اس سب کے باوجود ہماری جماعت میں کہاں کہاں  کمزوری  پائی گئی ہم اس کا جائزہ ضرور لیں گے۔

 

شبلی فراز کا مزید کہنا تھا کہ تنظیمی سطح پر بھی   ہماری جہاں جہاں  کمزوریاں  سامنے آئی ہیں ہم ان کو بھی دیکھ رہے ہیں اور ایک مفصل رپورٹ تیار کر کے وزیر اعظم عمرا ن خان کو پیش کریں گے۔وفاقی وزیر کا مزید کہنا تھا کہ جمعیت علمائے اسلام ف نے بلدیاتی الیکشن  میں صرف چند  سیٹوں پر کام یابی حاصل کی ہے مگریہ  انتخابات کا پہلا مرحلہ تھا  ہمیں  آگے کیلئے بہت سی  تیاری کرنی  ہو گی۔

 

گزشتہ شپ خود پر  ہونے والے حملے کے حوالے سے وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ کل مجھ پر بھی حملہ ہوا  لیکن اللہ نےاس حملے میں مجھے محفوظ رکھا۔ خیبر پختونخواہ   کے بلدیاتی انتخابات  میں ہونے والے ناخوشگوار واقعات کے حوالے سے شبلی فراز کا کہنا تھا کہ کل کچھ مقامات پر افسوس ناک واقعات  پیش  آئے جو کہ نہیں ہونے چاہیے تھے جبکہ شوکت ترین کی سینیٹ  میں کام یابی صوبے کیلئے بہتر ہو گی۔

 

 

بلدیاتی انتخابات، فائرنگ سے 2 افراد جاں بحق