اومیکرون میں مبتلا شخص نےدوڑیں لگوا دی

اومیکرون میں مبتلا شخص نےدوڑیں لگوا دی

 

 

نئی دہلی (نیا ٹائم ویب ڈیسک ) عالمی وباکورونا وائرس کےنئے ویریئنٹ اومیکرون سے متاثرہ مریض چکمہ دے کر ملک سے فرار ہو گیا جس کے بعد پولیس حکام سمیت دیگراداروں کی دوڑیں لگ گئیں۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کےمطابق ملک میں شناخت ہونے والااومی کرون کا پہلا متاثرہ 66 سالہ مریض قرنطینہ سنٹر کےبعد ملک سے بھی فرارہوگیا۔یہ واقعہ بھارتی ریاست کرناٹک میں پیش آیا ہے۔ میڈیارپورٹس کے مطابق 20 نومبرکو جنوبی افریقہ سے کرناٹک آنے والے2 بھارتی شہریوں میں کورونا وائرس اومیکرون ویریئنٹ کی تشخیص ہوئی تھی ۔جس کے بعد انہیں ہوٹل میں ٹھہرایا گیا۔جن میں سے ایک مریض ملک سے ہی فرار ہوگیا ہے۔بھارتی ریاست کرناٹک کے وزیرصحت نے کہا ہے کہ فرار ہونے والے شخص سےرابطے میں دس افراد آئے تھے جن کی شناخت کرلی گئی ہے اور ان کے ٹیسٹ بھی کیے گئے ہیں جو منفی آئے ہیں۔

ذرائع کے مطابق ملک سے فرار ہونے والے متاثرہ شخص کا قرنطینہ سنٹرمیں موجودایک سرکاری ڈاکٹر نے معائنہ بھی کیا تھا اور انہوں نے ہی اس شخص میں کورونا کی تصدیق کی تھی۔ اگلے روز اس نے پرائیویٹ لیب سے ٹیسٹ کروایا اورایئرپورٹ حکام کو منفی رپورٹ دکھا کرملک سےفرارہوگیا۔

جب اس شخص کے ٹیسٹ کی سرکاری رپورٹ آئی تو اس بات کی تصدیق ہوئی کہ یہ اومی کرون کا مریض ہے۔ذرائع کا کہنا تھا کہ ملک سے فرار ہونے والا متاثرہ شخص جوہانسبرگ کی ایک ادویہ ساز کمپنی کا نمائندہ بھی ہے۔بھارتی پولیس اور ہسپتال حکام کی متاثرہ شخص کے فرار ہونے کی اطلاع پر دوڑیں لگ گئی لیکن اس وقت وہ ہاتھ ملنے کے سوا کچھ بھی نہیں کرسکتے ۔