وینا ملک کی والدہ کا اسد خٹک پرحملہ

وینا ملک کی والدہ کا اسد خٹک پرحملہ

 

راولپنڈی(نیا ٹائم ویب ڈیسک) راولپنڈی کی مقامی عدالت میں اداکارہ وینا ملک کے سابق شوہراسد خٹک کی جانب سے بچوں کی تحویل کے لیے دائر درخواست کی سماعت ہوئی۔عدالت کے باہر ہی اسد خٹک میڈیا سےگفتگوکررہےتھےکہ قریب موجوداداکارہ وینا ملک کی والدہ نے اسد خٹک کو بوتل دے ماری۔وینا ملک نے بھی عدالت کے باہر کھڑی ماں کا ساتھ دیا اور سابق شوہراسد خٹک کو برا بھلا کہتی دکھائی دیں۔ پولیس اہلکار اور گارڈز نے اسد خٹک کو ریسکیو کیا اور انہیں دورلےگئے۔

بچوں کی حوالگی کے کیس میں اسد خٹک کے وکیل نے بچوں سے باپ کی ملاقات نہ کروائے جانے پر شکایت درج کروائی اور کہا کہ آج بچوں سےملاقات کرانی تھی،گزشتہ پیشی پربچوں کو ساتھ نہ لانے کی بنا پرعدالت نے جرمانہ عائد کیا تھا۔

وینا ملک کے وکیل نے جواب میں واضح کیا کہ بچوں سے ملاقات کرانے کا عدالت سے کوئی تحریری حکم نہیں دیا گیاہے۔ ہم چاہتے تھے بچوں کو ملوا دیا جائے لیکن دراصل بچے بیمار ہیں ، کراچی میں ہی رہ رہے ہیں کیسے لایا جائے؟اسد خٹک نے اگر بچوں سے ملاقات کرنی ہےتووہ گھرآجائیں اور وہاں مل لیں۔

عدالت نے بچوں کو والد سے ملاقات کرانے کی ہدایت دیتے ہوئے کہا ہے کہ اگر بچوں کو آج بھی ملاقات نہ کرنے دی گئی تو تحریری آرڈر بھجوائیں گے۔ کیس کی سماعت ڈیوٹی جج سول غلام اکبر نے کی ۔

واضح رہے کہ وینا ملک اور اسد خٹک میں علیحدگی ہو چکی ہے۔اداکارہ وینا ملک نے اپنے سابق شوہر اسد خٹک کو 50 کروڑ روپے کا لیگل نوٹس بھی بھیجوایا تھا۔لیگل نوٹس کی تحریر کے مطابق بچوں کو قانون کے مطابق پاکستان لایا گیا، اسد خٹک دبئی کی مقامی عدالت کاحکم نامہ غلط طریقےسے بیان کررہے ہیں۔

متن کے مطابق اسد خٹک مقامی عدالت کا مکمل آرڈر سوشل میڈیا پلیٹ فارم پر شیئر کریں، ان کے بے بنیاد اور فضول الزامات سے وینا ملک کی شہرت متاثر ہوئی ہے۔وینا ملک کی جانب سے بھجوائے گئے لیگل نوٹس میں مطالبہ دائر کیا گیا ہے کہ اسد خٹک 90 دنوں میں میڈیا اور سوشل میڈیا پرآکر ان سے معافی مانگیں،عدم تعمیل کی صورت میں اسد خٹک کےخلاف ہتک عزت کا دعویٰ دائرکیاجائےگا۔

 

سیالکوٹ واقعہ پر سری لنکن وزارت خارجہ کا رد عمل