• Saturday, 04 December 2021
ڈھول کی آواز سے مرغیوں کو دل کا دورہ

ڈھول کی آواز سے مرغیوں کو دل کا دورہ

انڈیا(نیاٹائم ویب ڈیسک)انڈین ریاست اڑیسہ میں باراتیوں کی طرف سے تیز میوزک اور ڈھول باجے کی وجہ سے 63 مرغیاں مرگئیں۔

 

انڈین میڈیا رپورٹس کے مطابق پولٹری فارم کے مالک رنجیت پریڑا نے اپنے ہمسائے کے خلاف نِلاگری پولیس سٹیشن میں مقدمہ درج کرادیا۔

 

مدعی مقدمہ نے باراتیوں پر الزام لگایا کہ اُونچی آواز میں ڈھول باجے اور گانے بجانے کی وجہ سے اس کی 63 مرغیوں کو دِل کا دورہ پڑگیا جس کے باعث وہ مر گئیں۔

 

فارم مالک کا کہنا ہے کہ بارات اتوار کی رات 11 بج کر 30 منٹ پر اس کے فارم کے سامنے سے گزری۔ گانوں کی حد سے زیادہ تیز آواز سن کر مرغیاں غیر معمولی ردعمل دینے لگیں اور کچھ مرغیاں اچھلنے لگیں۔

 

مذکورہ شخص کا کہنا تھا کہ اس نے ڈی جے سے میوزک کم کرنے کا کہا تو اس نے ایک نہ سنی، جس کے بعد ایک ایک کرکے 63 مرغیوں کی موت واقع ہو گئی۔

 

مرغیوں کی ہلاکت سے متعلق ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ تیز آواز کے سبب مرغیوں کو صدمہ پہنچا جس سے وہ بچ نہ پائیں۔

 

میڈیا رپورٹس کے مطابق 22 سالہ رنجیت نے انجینئرنگ کی ڈگری حاصل کی ہوئی ہے ۔ مناسب نوکری نہ ملنے کی وجہ سے اس نے 2019ء میں پرائیویٹ بینک سے 2 لاکھ روپے کا لون لے کر فارم اوپن کیا تھا۔۔ رنجیت نے اپنا نقصان بھرنے کےلئے باراتیوں سے درخواست کی جنہوں نے پیسے دینے سے صاف انکار کردیاہے۔
باراتیوں کا ترلا منت کرنے کے بعد جب کوئی چارہ نہ نکلا تو مذکورہ شخص نے پولیس سٹیشن کا رخ کر لیا اور ایف آئی آر درج کرادی۔

 

چلان کیوں کیا؟رکشہ نذرآتش

رابطے میں رہیے

نیوز لیٹر۔

روزانہ کی بڑی خبریں حاصل کریں بذریعہ