• Wednesday, 20 October 2021
13 کروڑ کے لہسن کہاں گئے؟

13 کروڑ کے لہسن کہاں گئے؟

اسلام آباد(نیاٹائم ویب ڈیسک) قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے فوڈاینڈ سکیورٹی کے اجلاس میں 13 کروڑ روپے مالیت کے ہائبرڈ لہسن کی چوری کی گونج سنائی دےرہی ہے۔
پاکستان مسلم لیگ ن کے رُکن قومی اسمبلی راؤ اجمل کی زیر صدارت قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے فوڈ اینڈ سکیورٹی کا اجلاس ہوا۔
قائمہ کمیٹی فار فوڈ سکیورٹی کے اجلاس میں نیشنل ایگری کلچر ریسرچ سینٹر (این اے آر سی) سے کروڑوں روپے کے ہائبرڈ لہسن بیج کی چوری کا معاملہ اُٹھایاگیا۔
چیئرمین فوڈ سکیورٹی کمیٹی راؤ اجمل نے ڈی جی این اے آر سی سے پوچھا کہ 13 کروڑ روپے کا لہسن این اے آر سی سے چوری ہواکیسے؟ جس وقت بیج چوری ہوا اس وقت لہسن کی قیمت 500 روپے فی کلو گرام تھی۔
چیئرمین راؤ اجمل نے پوچھا کہ کیا آپ کے پاس کوئی ریکارڈ نہیں۔؟ فوڈ سکیورٹی کیمٹی نے ڈی جی این اے آر سی سے لہسن کی کاشت کا ریکارڈ بھی مانگ لیا۔

 

مودی سرکار اپنے ہی کسانوں پر ٹوٹ پڑی