• Wednesday, 20 October 2021
چلتی گاڑی میں لڑکی سےاجتماعی زیادتی،،، کہاں ہوئی؟

چلتی گاڑی میں لڑکی سےاجتماعی زیادتی،،، کہاں ہوئی؟

 

گوجرہ (نیاٹائم ویب ڈیسک) پولیس کی طرف سے جاری کردہ تفصیلات کے مطابق ملزمان نے ٹوبہ ٹیک سنگھ کی رہائشی لڑکی کو بوتیک پر نوکری کا جھانسہ دے کر گوجرہ بلایا، ملزمان نےموٹروے پر لے جاکرکارمیں زیادتی کا نشانہ بنادیا اور لڑکی کو فیصل آباد انٹر چینج پر پھینک کر فرارہوگئے،پولیس حکام کاکہناہے کہ واقعہ کی تحقیقات شروع کردی گئیں ہے ،اٹھارہ سالہ متاثرہ لڑکی کا میڈیکل کرالیا گیا ہے تفتیش کوآگے بڑھانے کے لیےڈی این اے رپورٹ کا انتظارکیاجارہاہے۔

متاثرہ لڑکی کی پھوپھی کی طرف سےدرج کروائی گئی ایف آئی آر میں بتایا کہ ان کی بھتیجی کے موبائل فون پر میسج آیا کہ گوجرہ میں ملازمت کے لیےانٹرویو ہے، متاثرہ لڑکی گوجرہ پہنچی تو ملزمان نے اس کو گاڑی میں بٹھالیا اور موٹر وے پرلے جاکر زیادتی کا نشانہ بنادیا۔

ذرائع کےمطابق آئی جی پنجاب نےگوجرہ موٹر وے پرکار میں لڑکی سے مبینہ زیادتی کے واقعہ کا نوٹس لے کر آر پی او فیصل آباد سے رپورٹ طلب کرلی ہے، آئی جی پنجاب نے متعلقہ پولیس حکام کو ہدایت کی ہے کہ ملزمان کو جلد از جلد گرفتار کرکے ان کے خلاف سخت قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے،آئی جی پنجاب کاکہناہے کہ متاثرہ لڑکی کو انصاف کی فراہمی ترجیحی بنیادوں پر یقینی بنائی جائےگی ۔

آریان عام بیرک منتقل۔۔وجہ کیا بنی؟